1. مواد پر جائیں
  2. مینیو پر جائیں
  3. ڈی ڈبلیو کی مزید سائٹس دیکھیں
معاشرہیوکرین

رزق بھی ہتھیار بن گیا

21 مئی 2022

يوکرين زرعی اشياء برآمد کرنے والے اہم ممالک ميں شامل ہے۔ روسی حملے سے قبل يہ يورپی ملک کئی ملين ٹن گندم، مکئی اور سن فلاور کا تيل ايکسپورٹ کر رہا تھا۔ اب جب کہ روس نے يوکرينی بندرگاہيں بند کرا دی ہيں، يہ سب ممکن نہيں۔ ماہرين خبردار کر رہے ہيں کہ اس سے عالمی سطح پر خوارک کی قلت کا خطرہ ہے۔

https://www.dw.com/ur/%D8%B1%D8%B2%D9%82-%D8%A8%DA%BE%DB%8C-%DB%81%D8%AA%DA%BE%DB%8C%D8%A7%D8%B1-%D8%A8%D9%86-%DA%AF%DB%8C%D8%A7/video-61888897
ڈی ڈبلیو کی اہم ترین رپورٹ سیکشن پر جائیں

ڈی ڈبلیو کی اہم ترین رپورٹ

Indien MILAP Zeitung Urdu Geschichte

سردار بھگت سنگھ، جلیبی اور اردو کا اخبار

ڈی ڈبلیو کی مزید رپورٹیں سیکشن پر جائیں
ہوم پیج پر جائیں