خبریں | DW
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

اہم عالمی خبریں | 20.07.2018 | 07:00

صدر پوٹن کے دورہٴ واشنگٹن پر بات کی جا سکتی ہے، روس

امریکا میں روس کے سفیر اناتولی انتونوف نے کہا ہے کہ ماسکو حکومت صدر پوٹن کے دورہٴ واشنگٹن پر بات چیت کے لیے تیار ہے۔ روسی سفیر نے یہ بات صدر ٹرمپ کے اُس ٹویٹ کے جواب میں کہی، جس میں انہوں نے کہا تھا کہ وہ پوٹن سے دوبارہ ملاقات کے خواہش مند ہیں، تاکہ پہلی ملاقات میں طے کردہ امور پر عمل درآمد کا آغاز ہو سکے۔ امریکی صدر نے ہیلسنکی میں اپنے روسی ہم منصب سے ملاقات کے چند ہی روز بعد ایک اور ملاقات کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ وائٹ ہاؤس کی پریس سیکرٹری سارہ ہوکابی نے جمعرات کے دن کہا کہ صدر ٹرمپ نے قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن سے کہا ہے کہ وہ صدر پوٹن کو واشنگٹن کے دورے کی دعوت دیں۔

سابق جنوبی کوریائی صدر کو آٹھ برس کی سزا

جنوبی کوریا کی سابق صدر پارک گُن ہَے کو انتخابات میں مداخلت کرنے کے جرم میں آٹھ برس قید کی سزا کا حکم سنایا ہے۔ دارالحکومت سیئول کی عدالت نے پارک گُن ہَے کو غیر ضروری فنڈ جمع کرنے کے جرم میں چھ برس اور انتخابی عمل میں بیجا مداخلت پر اضافی دو برس سزائے قید سنائی ہے۔ دوسری جانب سابق کوریائی صدر نے کہا ہے کہ یہ الزامات سیاسی مخالفت کا نتیجہ ہیں۔ وہ جمعہ بیس جولائی کو عدالت میں فیصلہ سننے کے لیے موجود نہیں تھیں۔ کرپشن الزامات اور حکومتی راز افشاء کرنے پر پارک گُن ہے چوبیس برس کی سزا پہلے ہی بھگت رہی ہیں۔ انہیں سن 2017 میں منصبِ صدارت سے ہٹا دیا گیا تھا۔

طالبان کے حملے، ایک درجن سے زائد پولیس اہلکار ہلاک

طالبان نے کابل حکومت کے سکیورٹی اہلکاروں پر دو روزہ حملوں کا اعلان کیا ہے۔ جمعہ بیس جولائی کو افغان حکام نے بتایا کہ مختلف صوبوں میں قائم چیک پوسٹوں پر کیے جانے والے عسکریت پسندوں کے حملوں میں چودہ پولیس اہلکار ہلاک اور دیگر دس زخمی ہوئے ہیں۔ دوسری جانب طالبان کے ایک نمائندے نے نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کو بتایا ہے کہ انہیں واشنگٹن کی جانب سے مذاکرات کی پیشکش باضابطہ طور پر موصول نہیں ہوئی ہے۔ شناخت مخفی رکھتے ہوئے یہ بھی کہا گیا کہ طالبان اپنے خدشات کی روشنی میں امریکا کے ساتھ براہ راست مذاکرات پر راضی ہو سکتے ہیں کیونکہ افغان حکومت ویسے ہی امریکا کی کٹھ پتلی ہے۔

سعودی عرب پانچ ہسپانوی ساختہ جنگی بحری جہاز خریدے گا

سعودی عرب کی سرکاری دفاعی کمپنی نے اسپین کے بحری جہاز ساز ادارے نوانتیا (Navantia) سے پانچ جنگی بحری جہاز خریدنے کی ڈیل کو حتمی شکل دے دی ہے۔ سعودی عریبین ملٹری انڈسٹریز کے لیے ہسپانوی ادارہ پانچ جنگی بحری جہازوں کی تیاری کا سلسلہ رواں برس کے اختتام پر شروع کرے گا۔ سن 2022 تک تمام جنگی بحری جہاز سعودی عریبین ملٹری انڈسٹریز کو فراہم کر دیے جائیں گے۔ ریاض حکومت پانچ جنگی بحری جہاز 2.3 بلین ڈالر کے عوض خرید رہی ہے۔ اس ڈیل کو رواں برس ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی ہسپانوی دورے کے تسلسل میں طے کیا گیا ہے۔ اسی دورے کے دوران شہزادہ محمد نے جنگی بحری جہازوں کی خریداری میں دلچسپی ظاہر کی تھی۔

شمالی کوریائی معیشت میں شدید گراوٹ

شمالی کوریا کی اقتصادیات گزشتہ دو دہائیوں میں پہلی مرتبہ شدید دباؤ میں رہتے ہوئے تیزی سے سکڑ رہی ہے۔ سن 1998 کے بعد پہلی مرتبہ اس کمیونسٹ ملک کی انتہائی کم ہوتی ایکسپورٹ نے مجموعی معاشی حالت کو کمزور کرنے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ جنوبی کوریائی مرکزی بینک نے شمالی کوریا کی سالانہ شرح نمو کو3.5 فیصد کے لگ بھگ قرار دیا ہے۔ صنعتی پیداوار میں 8.5 فیصد کی کمی واقع ہو چکی ہے۔ اس پریشان کُن معاشی صورت حال کو سن 2017 میں عائد کی جانے والی سخت ترین بین الاقوامی پابندیوں کا نتیجہ قرار دیا گیا ہے۔ دوسری جانب خشک سالی نے بھی شمالی کوریائی عوام کے حالات کو مشکل سے مشکل تر بنا دیا ہے۔

امریکا میں کشتی ڈوبننے کے واقعہ میں دس ہلاک، کئی لاپتہ

امریکی ریاست میسوری کے جنوبی حصے میں سیاحوں سے بھری کشتی کے ایک جھیل میں ڈوبنے سے کم از کم دس افراد کی موت ہوئی ہے۔ حکام کے مطابق ٹیبل راک جھیل میں کشتی ڈوبے کے واقعے کے بعد کئی افراد ابھی لاپتہ ہیں۔ کشتی پر بچوں سمیت کُل اکتیس افراد سوار تھے۔ مقامی انتظامیہ کے مطابق لاپتہ افراد کی تلاش رات بھر جاری رکھی گئی ہے اور تمام افراد کی دستیابی تک یہ سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔ ٹیبل راک جھیل علاقے کے شیرف نے گیارہ ہلاکتوں اور سات زخمیوں کا بتایا جبکہ مقامی میڈیا نے ہلاکتیں دس بتاتے ہوئے واضح کیا ہے کہ ہلاکتوں کی تعداد زیادہ ہو سکتی ہے۔

یمنی ساحل کے قریب افریقی مہاجرین کی کشتی کی غرقابی

یمنی سکیورٹی ذرائع نے بتایا ہے کہ شبوا صوبے کے قریبی سمندری علاقے میں ایک کشتی ڈوب گئی ہے اور اس پر 160 سے زائد غیرقانونی افریقی مہاجرین سوار تھے۔ ان ذرائع نے کسی جانی نقصان یا بچ جانے والوں کی تفصیلات جاری نہیں کی ہیں۔ سکیورٹی حکام نے مقامی قبائلی لیڈروں کے توسط سے بتایا کہ کشتی جمعرات کی شام صومالی بندرگاہ بوساسو سے روانہ ہوئی تھی۔ اس پر سوار ایک سو افراد کا تعلق صومالیہ سے ہے جبکہ ساٹھ ایتھوپیا کےشہری ہیں۔ ان میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔ یہ امر اہم ہے کہ خانہ جنگی کے شکار ملک یمن میں شورش زدہ افریقی ممالک سے غیرقانونی مہاجرین کی آمد کا سلسلہ جاری ہے۔

شامی شہری رضاکاروں کا انخلا، امریکا پلان پر عمل جاری

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ حکومتی فورسز اور باغیوں کے درمیان ڈیل کے بعد جنوب مغربی شامی علاقے سے امریکی حمایت یافتہ شامی شہری دفاع کے کارکنان اور ان کے اہل خانہ کے انخلا کا عمل جلد شروع کر دیا جائے گا۔ روس نے باغیوں کو ایک ڈیل پر آمادہ کیا تھا، جس کے تحت وہ زیرقبضہ علاقہ شامی سکیورٹی فورسز کے سپرد کر کے محفوظ مقام کی جانب منتقل ہو گئے تھے۔ خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کا کہنا ہے کہ امریکا، برطانیہ اور کینیڈا ’وائٹ ہیلمٹ‘ کارکنان کو ٹرانزٹ کیمپوں میں منتقل کرنے کے پلان پر کام کر رہے ہیں۔ انخلا کے بعد ان رضاکاروں کو شام سے باہر دیگر ممالک میں منتقل کر دیا جائے گا۔

افغانستان: ہوائی حملے میں ایک درجن سے زائد عام شہریوں کی ہلاکت

افغان سکیورٹی حکام نے بتایا ہے کہ ہوائی حملے میں کم از کم چودہ شہری مارے گئے ہیں۔ ان ہلاک شدگان میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔ یہ فضائی حملہ شمالی شہر قندوز کے قریب چاردرہ علاقے میں کیا گیا۔ افغان حکام نے شہریوں کی ہلاکت کے واقعے کی تفتیش شروع کر دی ہے۔ یہ بھی ابھی واضح نہیں کہ فضائی حملے میں افغان یا امریکی جنگی طیاروں نے کیے تھے۔ تاہم امریکی فوج نے واضح کیا ہے کہ وہ اس حملے میں اُس کے جنگی جہاز شریک نہیں تھے۔ دوسری جانب اقوام متحدہ کے اعداد و شمار کے مطابق رواں برس کے نصف حصے کے دوران پرتشدد حالات میں شہریوں کی ہلاکتیں ریکارڈ سطح پر پہنچ گئی ہیں۔

بھارت میں واٹس ایپ سروس محدود کرنے کا فیصلہ

واٹس ایپ انتظامیہ نے اعلان کیا ہے کہ وہ بھارت میں اپنی سروس کو محدود کر رہی ہے۔ جمعہ بیس جولائی کو کیے جانے والے اعلان کی وجہ حالیہ ایام میں کم از کم بیس افراد کی واٹس ایپ میسجز کے تناظر میں ہونے والی ہلاکتیں بتائی گئی ہیں۔ نئی دہلی حکومت نے بھی واٹس ایپ میسیجنگ سروس کے خلاف قانونی چاری جوئی شروع کرنے کی دھمکی دے رکھی ہے۔ اس میسیجنگ سروس کا مالک ادارہ فیس بُک ہے۔ اس کے مطابق آزمائشی بنیاد پر واٹس ایپ پر پیغام روانہ کرنے کی سہولت کو اب محدود کر دیا گیا ہے۔

مہاجرین کے تنازعے پر حکومتی اعتماد کو نقصان پہنچا ہے، میرکل

جرمن چانسلر انگیلا میرکل نے کہا ہے کہ اُن کی مخلوط حکومت کو مہاجرت کی پالیسی پر جس تنازعے کا حالیہ ایام میں سامنا رہا ہے، اس کی وجہ سے حکومت پر اعتماد میں کمی واقع ہوئی ہے۔ میرکل نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ وہ اس کم ہونے والے عوامی اعتماد کو دوبارہ بحال کرنے کی بھرپور کوشش کریں گی۔ دوسری جانب جرمن چانسلر نے امریکی صر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے روسی صدر ولادیمیر پوٹن کو دی جانے والی واشنگٹن کے دورے کی دعوت کا خیر مقدم کیا ہے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ یہ مجوزہ ملاقات حالات کو بہتر بنانے میں مددگار ثابت ہو گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جرمن دارالحکومت برلن میں کی جانے والی ایک پریس کانفرنس میں کیا۔

امریکی ریاست آئیووا میں طوفانی بگولوں نے تباہی مچا دی

وسطی امریکی ریاست آئیووا کے تین اضلاع میں غیر متوقع طاقتور طوفانی بگولوں نے خوف و ہراس اور تباہی پھیلا دی۔ اس طوفان گرد و باد کی زد میں آ کر کم از کم سترہ افراد زخمی ہوئے ہیں اور کئی عمارتیں گر گئی ہیں۔ دس افراد مارشل ٹاؤن اور سات پیلا (Pella) نامی شہر میں زخمی ہوئے۔ ریاست آئیووا کے دارالحکومت ڈا موئن میں محکمہٴ موسمیات کا کہنا ہے کہ جمعرات انیس جولائی کی صبح تک طوفانِ بادوباراں کا امکان بہت کم تھا۔ طاقتور بگولوں نے سب سے زیادہ تباہی مارشل ٹاؤن میں مچائی ہے۔

بلوچستان میں بم دھماکا، چھ افراد زخمی

پاکستانی صوبے بلوچستان میں سڑک کے کنارے نصب ایک بم کے پھٹنے سے کم از کم چھ افراد زخمی ہوئے ہیں۔ یہ بم ایک فوجی قافلے کے قریب پھٹا۔ سرحدی شہر چمن کے مقامی پولیس افسر محمد حکیم کے مطابق اس بم دھماکے میں دس دکانیں بھی تباہ ہوئی ہیں۔ فی الحال کسی گروپ نے اس بم کو نصب کرنے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

امریکی وزرائے خارجہ و دفاع ستمبر میں بھارت کا دورہ کریں گے

امریکا کے وزرائے خارجہ اور دفاع بھارت میں رواں برس ہونے والی ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ میں شرکت کریں گے۔ یہ میٹنگ چھ ستمبر کو بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں ہو گی۔ اس ملاقات میں مائیک پومپیو اور جیمز میٹس اپنے بھارتی ہم منصبوں سُشما سوراج اور نرملا سیتا رامن سے مذاکرات کریں گے۔ میٹنگ میں دو طرفہ تجارتی معاملات کے علاوہ ایران کے ساتھ بھارتی کاروباری لین دین کے تناظر میں امریکی پابندیوں کی دھمکی کو خاص طور پر زیر بحث لایا جا سکتا ہے۔ بھارتی وزارت دفاع نے اس میٹنگ کو ٹُو پلس ٹو (2+2) میٹنگ کا نام دیا ہے۔

آڈیو سنیے 04:00
Now live
04:00 منٹ
ویڈیو دیکھیے 04:23
Now live
04:23 منٹ