سزا منسوخ ، سلمان خان بری کر دیے گئے | فن و ثقافت | DW | 10.12.2015
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

سزا منسوخ ، سلمان خان بری کر دیے گئے

ممبئی کی ہائی کورٹ نے بالی ووڈ سپر اسٹار سلمان خان کے ’ہٹ ایںڈ رن‘ مقدمے کی اپیل پر سنوائی کے بعد ان کی سزا منسوخ کر دی ہے۔ ایک ماتحت عدالت نے اسی کیس میں خان کو پانچ سال کی سزائے قید سنائی تھی۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی نے جمعرات دس دسمبر کو اپنی ایک رپورٹ میں لکھا ہے کہ فلمی ستارے سلمان خان کو اس مقدمے سے بری کرتے ہوئے ممبئی کی ہائی کورٹ نے کہا کہ ایسے شواہد نہیں مل سکے کہ خان اس مقدمے میں قصورار قرار دیے جاتے۔ اس عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ ماتحت عدالت نے غلطی کی تھی، اس لیے اب اس فیصلے کو منسوخ کیا جاتا ہے۔

مئی میں اس ماتحت عدالت نے سلمان خان کو ایک بے گھر شخص کو غیر ارادی طور پر قتل کرنے کے جرم میں پانچ برس کی سزائے قید سنائی تھی۔ تاہم سلمان خان نے جب اس فیصلے کے اپیل دائر کی تھی تو انہیں ضمانت پر رہا کر دیا گیا تھا۔ انچاس سالہ سلمان خان بھارت میں انتہائی مقبول ہیں۔ وہ اپنے طویل کیریئر میں اسّی سے زائد ہندی فلموں میں اداکاری کے جوہر دیکھا چکے ہیں۔

تیرہ برس قبل سن 2002 میں سلمان خان نے مبینہ طور پر ممبئی میں سڑک کے کنارے واقع ایک فٹ پاتھ پر سوئے ہوئے کچھ افراد پر گاڑی چڑھا دی تھی، جس کے نتیجے میں ایک شخص مارا گیا تھا۔ اس کیس کی ابتدائی تحقیقات سے ظاہر ہوا تھا کہ سلمان خان شراب پی کر گاڑی چلا رہے تھے۔

ممبئی ہائی کورٹ کے جج انیل رام چندر جوشی نے اپنے فیصلے میں کہا کہ ایسے ثبوت نہیں مل سکے ہیں کہ حادثے کے وقت سلمان خان ہی گاڑی چلا رہے تھے اور وہ شراب کے نشے میں دھت تھے۔ اس مقدمے میں سلمان خان کے وکلاء کا اصرار تھا کہ جب حادثہ رونما ہوا تھا تو ان کے موکل کا ڈرائیور گاڑٰ چلا رہا تھا۔

Indien Film Bollywood Schauspieler Salman Khan

انچاس سالہ سلمان خان بھارت میں انتہائی مقبول ہیں

جمعرات کے دن جب ممبئی ہائی کورٹ نے فیصلہ سنایا تو انچاس سالہ سلمان خان کمرہ عدالت میں ہی موجود تھے۔ ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی جا سکتی ہے۔ جب عدالت نے دس دسمبر کو یہ فیصلہ سنایا تو میڈیا کی ایک بڑی تعداد کمرہ عدالت کے باہر موجود تھی۔

سلمان خان نے کئی فلموں کو سائن کر رکھا ہے۔ وہ 2017ء تک بُک ہیں جبکہ جن فلموں میں وہ کام کر رہے ہیں ، ان کا بجٹ 31.5 ملین ڈالر کے قریب بنتا ہے۔ فلموں میں کام کرنے کے علاوہ وہ خیراتی اور امدادی کاموں مییں بھی مشغول رہتے ہیں۔ وہ Being Human فاؤنڈیشن بھی چلا رہے ہیں، جو غریب بچوں کے لیے تعلیم اور صحت کے شعبے میں کام کرتی ہے۔

اشتہار