کورونا پابندیوں کے خلاف احتجاج، اداکارہ نے کپڑے اتار دیے | فن و ثقافت | DW | 13.03.2021
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages
اشتہار

فن و ثقافت

کورونا پابندیوں کے خلاف احتجاج، اداکارہ نے کپڑے اتار دیے

فرانسیسی دارالحکومت پیرس میں سیزر ایوارڈز کی تقریب 12 مارچ کی رات منعقد کی گئی۔ اس تقریب میں ایک اداکارہ نے کورونا پابندیوں کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے اپنے کپڑے اتار دیے۔

فرانس کے قومی فلم ایوارڈ کا نام 'سیزر ایوارڈ‘ ہے۔ اس میں فلمی صنعت کے مختلف شعبوں میں نمایاں کارکردگی دکھانے والے فنکاروں اور تکنیکی عملے کو ایوارڈز دیے جاتے ہیں۔ چھیالیسویں سیزر ایوارڈز کی تقریب پیرس میں 12 مارچ بروز ہفتہ کی شب منعقد ہوئی۔

مقتول فرانسیسی ٹیچر کے لیے اعلیٰ ترین ملکی اعزاز

اس تقریب میں تھیٹرز اور سنیما گھروں کی بندش کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے معروف اداکارہ کورین مازیرُو نے اسٹیج پر اپنے کپڑے اتار دیے۔ فرانس میں کورونا وبا پر قابو پانے کے لیے پیرس حکومت نے کئی مہینوں سے ہر قسم کی ثقافتی تقاریب پر مکمل پابندی عائد کر دکھی ہے۔

Frankreich 46th Cesar

چھیالیسویں سیزر ایوارڈز کی تقریب بارہ مارچ کو پیرس میں منعقد ہوئی

نو کلچر نو فیوچر

کورین مازیرُو نے اسٹیج پر پہنچ کر جب کپڑے اتار دیے تو ان کے سینے پر لکھا تھا '‘نو کلچر نو فیوچر‘ یعنی ثقافت نہیں تو مستقبل بھی نہیں۔ اسی طرح ان کی پشت پر تحریر تھا ' گِو اَس آرٹ بیک ژاں‘۔ یہ ملکی وزیر اعظم ژاں کاسٹیکس کے لیے پیغام تھا، ''ژاں ہمیں ہمارا آرٹ واپس کرو‘‘۔

ایوارڈز کی اس تقریب میں کورین مازیرُو کی نام زدگی برائے بہترین اداکارہ کے طور پر تھی۔ وہ اسٹیج پر بہترین کیٹگری برائے بیسٹ کاسٹیوم کا ایوارڈ دینے کے لیے بلائی گئی تھیں۔

بیلاروس کی اپوزیشن کے لیے یورپی ایوارڈ

فنکاروں میں غم و غصہ

کورونا وبا کے پھیلاؤ کی وجہ سے فرانس میں سبھی سینما گھر، اوپرا ہاؤسز، عجائب گھر، آرٹ گیلریاں اور تھیٹرز بند ہیں۔ جمالیاتی اور پرفارمنگ آرٹ کی تقریبات کا کوئی اہتمام نہیں اور اس وجہ سے سبھی ملکی فنکاروں میں بے چینی، مایوسی اور رنج و غم پایا جاتا ہے۔ رواں برس سیزر ایوارڈ کے لیے ایک روز قبل منعقد کی جانے والی ریڈ کارپٹ کی گلیمرس تقریب بھی منعقد نہیں کی گئی۔

Frankreich 46th Cesar | Virginie Efira

فرانسیسی اداکارہ ورجینیا ایفیرا ایوارڈز تقریب میں

کورین مازیرُو

فرانسیسی فلم انڈسٹری کی مشہور ادکارہ کورین مازیرُو ستاون برس کی ہیں۔ ان کو سن 2012 میں بے بہا شہرت ان کی فدلم 'لوئی ویمر‘ سے حاصل ہوئی تھی۔ انہیں 'لوئی ویمر‘ فلم میں بھی سیز‍ر ایوارڈ کے لیے بیترین اداکاری کی کیٹگری میں نامزدگی حاصل ہوئی تھی لیکن ابھی تک وہ کوئی ایوارڈ حاصل نہیں کر سکی ہیں۔ انہوں نے کئی فلموں میں یادگار کردار نگاری کا مظاہرہ کیا ہے۔ ان کا سیاسی جھکاؤ بائیں بازو کی سیاست کی جانب ہے۔

2021ء کا لائبنٹس ایوارڈ پاکستانی نژاد محققہ آصفہ اختر کے نام

سیزر ایوارڈ

فرانس میں سیزر ایوارڈز کو 'آسکر‘  کا درجہ حاصل ہے۔ اس کو سن 1976 میں متعارف کرایا گیا تھا۔ اس کے لیے صرف بارہ کیٹگریز مخصوص ہیں۔ اس کی سالانہ تقریب کم و بیش ہر سال فروری کے وسط میں منعقد کی جاتی ہے۔ ایوارڈز دینے کی تقریب کا اہتمام ملکی وزارت برائے ثقافت کرتی ہے۔ اس کے انعقاد کا شہر تو پیرس رہتا ہے لیکن تقریب کا ہال تبدیل ہوتا رہتا ہے۔

 ع ح، ع ت (روئٹرز)