چیمپئنز لیگ کا فائنل کون جیتے گا؟ نیمار یا لیونڈوفسکی | کھیل | DW | 23.08.2020
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages
اشتہار

کھیل

چیمپئنز لیگ کا فائنل کون جیتے گا؟ نیمار یا لیونڈوفسکی

دنیائے فٹ بال کے مہنگا ترین ٹورنامنٹ چیمپئنز لیگ کا فائنل اتوار 23 اگست کی شب بائرن میونخ اور پیرس سینٹ جرمین کی ٹیموں کے مابین کھیلا جا رہا ہے۔ جرمن کلب بائرن میونخ کی ٹیم ایک نئی تاریخ رقم کرنے کے لیے پرعزم ہے۔

پرتگالی دارالحکومت لزبن میں چیمپئنز لیگ کے فائنل میں جرمن کلب بائرن میونخ چھٹی مرتبہ یہ ٹائٹل جیتنے کی کوشش کرے گا۔ اگر میونخ کی ٹیم کو کامیابی ملتی ہے تو وہ ایک نئی تاریخ رقم کر دے گی۔ اب تک کوئی بھی جرمن کلب چھ مرتبہ یہ ٹائٹل نہیں جیت سکا۔

بائرن میونخ کی ٹیم اس مقابلے میں اب تک ناقابل شکست رہی ہے۔ اس نے دس میچوں میں مسلسل کامیابی حاصل کی ہے۔ اگر وہ فائنل میچ میں بھی حریف ٹیم کو شکست دینے میں کامیاب رہی تو یہ بھی ایک ریکارڈ بن جائے گا۔ ان مقابلوں میں آج تک کوئی بھی ٹیم لگاتار گیارہ میچوں میں کامیابی حاصل نہیں کر سکی۔

بائرن میونخ اپنے گزشتہ انتیس میچوں میں ناقابل شکست ثابت ہوئی ہے۔ اس دوران اس جرمن کلب کی ٹیم نے چورانوے گول اسکور کیے۔ اس جرمن کلب کی طرف سے ٹاپ اسکورر پولش کھلاڑی رابرٹ لیونڈوفسکی ہیں، جنہوں نے اس ٹورنامنٹ میں اب تک پندرہ گول کیے ہیں۔

Champions League | Halbfinale | Lyon vs. Bayern München - Robert Lewandowski (AFP/F. Fife)

جرمن کلب کی طرف سے پندرہ گول کے ساتھ ٹاپ اسکورر پولش کھلاڑی رابرٹ لیونڈوفسکی ہیں

کوارٹر فائنل میں مایہ ناز ہسپانوی کلب ایف سی بارسلونا کے خلاف میچ میں میونخ کے اسٹرائیکر لیونڈوفسکی نے اہم کردار ادا کیا تھا۔ میونخ نے یہ میچ دو کے مقابلے میں آٹھ گول سے اپنے نام کیا تھا۔

اس مرتبہ اس جرمن کلب کو فیورٹ قرار دیا جا رہا ہے تاہم پیرس کی ٹیم اسے سخت مقابلہ دینے کی اہل تصور کی جا رہی ہے۔ بالخصوص پیرس کا دفاع انتہائی مضبوط ہے، جس میں کپتان اور سینٹر بیک تھیاگو سلوا ایک سیسہ پلائی ہوئی دیوار ہیں۔ برازیلین اسٹار سلوا کا ممکنہ طور پر پیرس کے لیے یہ آخری میچ ہو گا۔

پیرس کی ٹیم کا اٹیک بھی مضبوط ہے، جس میں برازیلین اسٹار نیمار جونیئر، کلیان ام ماپے اور ارجنٹائن کے اینجلو ڈی ماریا نمایاں ہیں۔ میچ سے قبل فرانسیسی اسٹار اور نوجوان کھلاڑی ام ماپے نے کہا، ''میں نے ہمیشہ ہی کہا ہے کہ میں اپنے ملک کے لیے تاریخ رقم کرنا چاہتا ہوں اور آج میرے پاس موقع ہے۔‘‘

پیرس سینٹ جرمین پہلی مرتبہ چیمپئنز لیگ کے فائنل تک رسائی حاصل کرنے میں کامیاب ہوا ہے۔ اس سے قبل فرانس کا صرف ایک ہی کلب اس اہم یورپی ٹورنامنٹ کا ٹائٹل جیتنے میں کامیاب ہو سکا ہے۔ سن 1993 میں اولمپیک مارسیلا نے یہ ٹائٹل اپنے نام کیا تھا۔

کورونا وائرس کی وجہ سے لزبن کے اسٹاڈیو ڈا لوئز میں ہونے والے فائنل میچ میں تماشائی موجود نہیں ہوں گے۔ اس عالمی وبا سے نمٹنے کے لیے نہ صرف اس میچ بلکہ پورے ٹورنامنٹ کے دوران بھی انتہائی سخت اقدامات کیے گئے ہیں۔

ع ب / م م / خبر رساں ادارے

DW.COM

Audios and videos on the topic