امریکیوں کو متحد ہونے کی ضرورت ہے، صدر ڈونلڈ ٹرمپ | حالات حاضرہ | DW | 06.02.2019
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages
اشتہار

حالات حاضرہ

امریکیوں کو متحد ہونے کی ضرورت ہے، صدر ڈونلڈ ٹرمپ

امریکی صدرٹرمپ نے کانگریس سے اپنے سالانہ خطاب میں ملکی شہریوں سے کہا کہ وہ اپنے اندر اتحاد اور اتفاق پیدا کریں۔ انہوں نے انتقام اور مزاحمت کے رویوں کو موقوف کر کے تعاون اور مشترکہ بھلائی کو اپنانے کو بھی اہم قرار دیا۔

کانگریس کے اراکین نے براہ راست اور لاکھوں امریکی شہریوں نے ٹیلی وژن پر صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا سالانہ خطاب سنا۔ اپنے اسٹیٹ آف دا یونین خطاب میں ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ بدلے، انتقام اور اعتراض کی سیاست کو مسترد کرنے کی ضرورت ہے اور اِن کی جگہ پر بے پناہ تعاون، سمجھوتے اور مشترکہ بھلائی کو اپنے اندر پیدا کرنا اہم ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ترقی کے لیے آگے بڑھنے یا جمودی کیفیت میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنا ہو گا۔

اسی طرح اپنی تقریر میں ٹرمپ نے اس امرکی طرف بھی توجہ دلائی کہ مثبت نتائج بہتر ہیں یا مزاحمتی عمل، بے پناہ ترقی یا لایعنی تباہی میں سے بھی بہتر کو اپنانا وقت کا تقاضا ہے۔ امریکی صدر نے جب اپنی تقریر میں ان عوامل کا پرزور انداز میں تذکرہ کیا تو اُن کے حمایتی اراکین کانگریس پرمسرت انداز میں بار بار ڈیسک بھی بجاتے رہے۔

کانگریس سے خطاب کرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ نے چین کے ساتھ تجارتی معاملات میں زور آور پالیسی اپنانے کا بھی دفاع کیا۔ انہوں عالمی سطح پر سفارت کاری میں ذاتی پہل کاری کے تناظر میں شمالی کوریا کے لیڈر چیرمین کم جونگ اُن کے ساتھ رواں مہینے کے دوران ایک اور ملاقات کرنے کا بھی اعلان کیا۔ امریکی صدر اور شمالی کوریائی لیڈر کے درمیان ملاقات ستائیس اور اٹھائیس فروری کو ویت نام میں ہو گی۔

USA Ansprache zur Lage der Union in Washington (Reuters/J. Young)

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کانگریس سے خطاب کرتے ہوئے

اس تقریر کے دوران جب ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے پسندیدہ موضوع یعنی میکسیکو کی سرحد پر دیوار تعمیر کرانے پر گفتگو شروع کی، تو ڈیموکریٹک پارٹی کے اراکین کے چہروں سے بےچینی عیاں ہونے لگی۔ ٹرمپ کے مطابق دیوار کی تعمیر حقیقت میں غیرقانونی مہاجرین کے امریکا میں داخل ہونے کے سلسلے کو روکے گی۔ تقریر کے اس مقام پر ٹرمپ نے زور دے کر کہا کہ وہ یہ دیوار تعمیر کر کے رہیں گے اور اس موقع پر انہیں ری پبلکن پارٹی کے اراکین کی جانب سے زور دار پذیرائی حاصل ہوئی۔

مبصرین کا خیال ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اسٹیٹ آف دا یونین خطاب میں اپنی دو سالہ صدارت کے دوران تقسیم اور جوڑ توڑ کی سیاست کو ختم کرتے ہوئے ایک غیر جانبدار قومی لیڈر کا روپ دھارنے کی کوشش کی ہے۔ تجزیہ کاروں نے صدر ٹرمپ کے اِس انداز پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے خیال ظاہر کیا ہے کہ یہ وقت بتائے گا کہ وہ خود اِن پر کس حد تک عمل کرتے ہیں۔

DW.COM