استعمال شدہ آئی فونز کی درآمد، بھارت نے ایپل کو روک دیا | سائنس اور ماحول | DW | 05.05.2016
  1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

استعمال شدہ آئی فونز کی درآمد، بھارت نے ایپل کو روک دیا

بھارت نے ایپل کمپنی کو استعمال شدہ آئی فون درآمد کرنے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا ہے۔ ایپل کمپنی کے لیے اسے ایک دھچکا قرار دیا جا رہا ہے کیونکہ ایپل اسمارٹ فونز کی فروخت میں پہلے ہی کمی آ چکی ہے۔

ایپل کمپنی دنیا بھر میں اپنے اسمارٹ فونز کی فروخت میں اضافہ چاہتی ہے اور اس مقصد کے لیے وہ امریکا سمیت دنیا کے کئی ملکوں میں ارزاں نرخوں پر استعمال شدہ یا خرابی کے بعد مرمت شدہ موبائل فون فروخت کر رہی ہے۔

اسمارٹ فونز کے استعمال کے حوالے سے بھارت دنیا کی سب سے تیزی سے ترقی کرتی ہوئی مارکیٹ ہے اور یہی وجہ ہے کہ ایپل کمپنی اس ملک میں کم قیمتوں پر موبائل فون فروخت کرنے والی کمپنیوں کا مقابلہ کرنا چاہتی ہے۔

دوسری جانب بھارت ’میڈ اِن انڈیا‘ کا نعرہ لگا رہا ہے اور ملک کے اندر مینوفیکچرنگ کے شعبے میں مسابقت کا ماحول پیدا کرنا چاہتا ہے۔ بھارت میں وزارت مواصلات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ایک سینیئر اہلکار کا اپنا نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر نیوز ایجنسی روئٹرز سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا، ’’یہ تجویز یہ کہتے ہوئے مسترد کر دی گئی کہ ملک میں استعمال شدہ الیکٹرانک مصنوعات کو درآمد کرنے کی اجازت نہیں ہے۔‘‘

Indien Telefon Handy Nutzung in New Delhi Altstadt

اندازوں کے مطابق رواں برس بھارت میں اسمارٹ فونز کی خریداری میں پچیس فیصد اضافہ متوقع ہے

اس سرکاری اہلکار کے مطابق یہ تجویز ایپل کمپنی کی طرف سے پیش کی گئی تھی تاہم ایپل نے یہ درخواست بھی کی تھی کہ ان مذاکرات کو منظرعام پر نہ لایا جائے۔ ایپل نے اس بھارتی فیصلے پر کوئی بھی تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا ہے۔

دوسری جانب ایپل کی اس تجویز کی مخالفت بھارت کی مقامی فون ساز کمپنیوں کی طرف سے بھی کی گئی تھی۔ مقامی کمپنیوں کو خدشہ ہے کہ اس طرح بھارتی مارکیٹ میں ان کا حصہ کم ہو جائے گا۔ اطلاعات کے مطابق بھارت کی کنزیومر الیکٹرانکس اور گیجٹس مینوفیکچررز ایسوسی ایشن نے بھی بھارتی ٹیلی کام اتھارٹی کو ایک خط لکھتے ہوئے کہا تھا کہ اس اقدام کو فوری طور پر روک دیا جائے۔

بھارتی حکومت کی طرف سے یہ فیصلہ ایک ایسے وقت پر کیا گیا ہے، جب پہلی مرتبہ ایپل کی سب سے اہم مارکیٹ چین میں آئی فونز کی فروخت میں کمی کی خبریں سامنے آئی ہیں۔

بھارتی مارکیٹ میں ایپل کا حصہ صرف دو فیصد ہے لیکن اس ملک میں رواں برس کی پہلی سہ ماہی کے دوران ایپل موبائل فونز کی فروخت میں 56 فیصد اضافہ ہوا تھا۔ اس دوران سب سے زیادہ آئی فون 5s فروخت ہوئے تھے جبکہ آئی فون 6s کی فروخت نے اس کمپنی کو ناامید ہی کیا تھا۔

تجزیہ کار ویلمر اینگ کہتے ہیں، ’’آئی فون فائیو ایس کی کامیابی کا راز یہ ہے کہ لوگ اسے خریدنے کی سکت رکھتے ہیں۔ کسی بھی چھوٹے فون کی نسبت صارف پریمیم برانڈ خریدنے میں خوشی محسوس کرتا ہے جبکہ قیمتیں زیادہ ہونے کی وجہ سے کم بجٹ والے لوگوں کی حوصلہ شکنی ہوتی ہے۔‘‘

اندازوں کے مطابق رواں برس بھارت میں اسمارٹ فونز کی خریداری میں پچیس فیصد اضافہ متوقع ہے۔