1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

یوگا کی بدولت بھارتی قیدیوں کی سزاؤں میں کمی

بھارتی ریاست مدھیہ پردیش میں حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ وہاں ریاستی جیلوں میں قید یوگا سیکھنے والے قیدیوں کی سزاؤں میں کمی کر دی جائے گی اور انہیں قبل از وقت رہائی مل سکے گی۔

default

ایک سادھومندرمیں یوگا کرتے ہوئے

مدھیہ پردیش میں جیل خانہ جات کے انسپکٹر جنرل سنجے مانے نے جمعرات کے روز اعلان کیا کہ جو سزا یافتہ قیدی خود پر قابو پانے اور اپنے طیش کو کنٹرول کرنے کے لئے یوگا کے تربیتی کورسز میں حصہ لیں گے، انہیں جسمانی طور پر صحت مند رہنے کے علاوہ اپنے رویے کو پرسکون رکھنے اور ذہنی دباؤ میں کمی کے عمل میں بھی مدد ملے گی۔

Indischer Yoga Guru Baba Ramdev

گرو بابا رام دیو جو یوگا کے ماہر ہیں

اسی لئے ریاستی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ہر وہ قیدی جو تین ماہ تک یوگا کے ایسے تربیتی پروگراموں میں حصہ لے گا، اس کی سزا میں ہر سہ ماہی کے بدلے پندرہ روز کی کمی کر دی جائے گی۔

سنجے مانے کے بقول ریاست کی جیلوں میں قیدیوں کو یہ مواقع بھی فراہم کئے جاتے ہیں کہ وہ اپنی سزا کے عرصے کے دوران تعلیمی پروگراموں میں حصہ لیتے ہوئے سکول اور کالج تک کی ڈگریاں بھی حاصل کر سکتے ہیں۔ جہاں تک یوگا کے تربیتی کورسز کا تعلق ہے تو متعلقہ قیدی کی ایسے پروگراموں میں شرکت اور جیل کے سپرنٹنڈنٹ کی طرف سے اچھے کردار کی تصدیق کے بعد سزا یافتہ افراد اپنی قید کے عرصے میں واضح کمی کو یقینی بنا سکیں گے۔

مدھیہ پردیش میں سزا یافتہ مجرموں کی نفسیاتی اور سماجی تربیت کے نقطہ نظر سے اس پروگرام کا آغاز فی الحال تجرباتی طور پر صرف گوالیار شہر کی مرکزی جیل میں کیا گیا ہے۔ وہاں اس یوگا پروجیکٹ میں شرکت کے لئے اب تک قریب 400 قیدی اپنا اندراج کروا چکے ہیں۔

رپورٹ: عصمت جبیں

ادارت: مقبول ملک