1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

یورو زون کو مستحکم بنانے کے لیے متعدد اقدامات کا اعلان

یورو زون میں قرضوں کے بحران سے نمٹنے کے لیے جرمن چانسلر انگیلا میرکل اور فرانسیسی صدر نکولا سارکوزی نے بجٹ خساروں میں کمی اور سال میں یورپی رہنماؤں کےکم از کم دو اجلاس منعقد کرنے سمیت متعدد اقدامات کا اعلان کیا۔

default

جرمن چانسلر انگیلا میرکل اور فرانسیسی صدر نکولا سارکوزی

دونوں کے درمیان منگل کو پیرس میں ہونے والی ملاقات میں اس بحران سے نکلنے میں مدد کے لیے فوری طور پر یورو بانڈز کے اجراء پر اتفاق نہیں کیا گیا۔ ملاقات کے بعد ایک مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فرانسیسی صدر نکولا سارکوزی نے کہا کہ یورو زون کے اقتصادی مسائل سے نمٹنے کے لیے ایک صدر منتخب کیا جائے گا جس کے عہدے کی مدت ڈھائی سال ہو گی۔ اس مقصد کے لیے انہوں نے یورپی کونسل کے صدر ہیرمان فان رومپوئے کا نام تجویز کیا۔

نکولا سارکوزی نے کہا کہ یورو زون کے کمزور اراکین کے تحفظ کے لیے جرمنی اور فرانس کے وزرائے خزانہ آئندہ ماہ مالیاتی لین دین پر ٹیکس کی تجویز پیش کریں گے۔ دونوں رہنماؤں کا کہنا تھا کہ یورو زون کے تمام رکن ممالک کو اپنے مالیاتی حسابات میں توازن پر وابستگی کا اظہار کرنا چاہیے اور اس چیز کو اپنے آئین میں شامل کرنا چاہیے۔

Kampf um den Euro

یورو زون میں قرضوں کا بحران شدت اختیار کرتا جا رہا ہے

یورپی کمیشن کے صدر یوزے مانویل باروسو اور یورپی یونین کے کمشنر برائے اقتصادی امور اولی رین نے ان تجاویز کا خیر مقدم کرتے ہوئے انہیں 'زیادہ مستحکم اور مضبوط سیاسی قیادت' کی جانب پیشرفت قرار دیا ہے۔

اٹلی اور اسپین کے قرضوں میں ہوشربا اضافے، امریکہ کی قرض کی درجہ بندی میں کمی اور پھر اب فرانس کی ٹرپل اے درجہ بندی میں بھی کمی کی قیاس آرائیوں کے بعد گزشتہ ہفتے مالیاتی منڈیوں میں شدید اضطراب دیکھنے کو آیا۔ اس کے بعد یہ توقع کی جا رہی تھی کہ یورو زون پر اعتماد بحال کرنے کے لیے کچھ ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں گے۔ ان میں سے ایک تجویز یورو بانڈز کا اجرا تھا جس کے لیے جرمنی اور فرانس نے کوئی حامی نہیں بھری۔ جرمنی کی حکومت ایسی کسی بھی تجویز کی سختی سے مخالفت کرتی ہے کیونکہ اس کے خیال میں اس سے ملکی معیشت کو بہتر طور پر منظم کرنے والے ملکوں پر اضافی بوجھ پڑے گا۔ فرانس کے خیال میں اس اقدام سے م‍الیاتی طور پر مستحکم ملکوں کی قرض کی درجہ بندی متاثر ہو سکتی ہے۔

Eurogruppe berät Ausweitung des Rettungsschirms

بحران پر قابو پانے کی ایک تجویز یورو بانڈز کا اجرا ہے

رواں سال کی دوسری سہ ماہی میں جرمنی اور فرانس دونوں کی شرح نمو کے اعداد و شمار مایوس کن رہے ہیں۔ دوسری سہ ماہی میں جرمنی کی اقتصادی نمو 0.1 فی صد رہی جبکہ فرانس کی صفر فی صد رہی۔

ملاقات سے قبل فرانس کے صدر نے وزیر اعظم Francois Fillon سے فرانس کے بجٹ خسارے پر تبادلہ خیال کیا۔ فرانس نے 2013 ء تک اپنے بجٹ خسارے کو مجموعی ملکی پیداوار کے 5.3 فی صد سے کم کر کے 3 فیصد تک لانے کا عزم ظاہر کیا ہے۔

یورپ کی دو بڑی اقتصادی طاقتوں جرمنی اور فرانس کے رہنماؤں کی ملاقات کے بعد مشترکہ پیغام میں اس بات پر زور دیا گیا کہ کمزور ملکوں کی مالی امداد کے بجائے اقتصادی استحکام پر توجہ دی جائے اور یہ کہ یورو زون کے قواعد اور مالیاتی اہداف سے ہٹنے کو کسی صورت بھی برداشت نہیں کیا جائے گا۔

رپورٹ: حماد کیانی

ادارت: شادی خان سیف

DW.COM