1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ہینوور میں دنیا کے سب سے بڑے صنعتی تجارتی میلے کا افتتاح

شمالی جرمنی کے شہر ہینوور میں دنیا کے سب بڑے صنعتی تجارتی میلے کا افتتاح ہو گیا ہے۔ اس سال اس پانچ روزہ عالمی تجارتی نمائش کا خصوصی پارٹنر ملک پولینڈ ہے۔ میلے کا افتتاح جرمن چانسلر اور پولینڈ کی وزیر اعظم نے مل کر کیا۔

Hannover Messe 2017 Angela Merkel (picture-alliance/dpa/J. Stratenschulte)

ہینوور کی عالمی صنعتی نمائش کے افتتاح کے موقع پر جرمن چانسلر میرکل، بائیں، پولینڈ کی وزیر اعظم شیڈلو کے ہمراہ

شمالی جرمن صوبے لوئر سیکسنی کے دارالحکومت ہینوور سے اتوار تئیس اپریل کی شام ملنے والی نیوز ایجنسی ڈی پی اے کی رپورٹوں کے مطابق اس میلے کا باضابطہ افتتاح آج شام جرمن چانسلر انگیلا میرکل اور پولینڈ کی خاتون وزیر اعظم بیاٹا شیڈلو نے مشترکہ طور پر کیا۔ پولینڈ اس مرتبہ پانچ روز تک جاری رہنے والی اس عالمی نمائش کا خصوصی پارٹنر ملک بھی ہے۔

مودی کے ہاتھوں جرمنی میں تجارتی میلے کا افتتاح

دنیا کا سب سے بڑا صنعتی میلہ: اس سال پارٹنر ملک بھارت

جرمنی میں دنیا کا سب سے بڑا صنعتی تجارتی میلہ آج سے

اپنی نوعیت کی یہ سب سے بڑی سالانہ عالمی نمائش ہینوور میں اس سال  مجموعی طور پر 70 ویں مرتبہ منعقد کی جا رہی ہے اور اس نمائش کا اہم ترین موضوع وہ ’اِنٹیگریٹڈ انڈسٹری‘ ہے، جس میں بین الاقوامی سطح پر روبوٹس اب زیادہ سے زیادہ اہم اور متنوع کردار کے حامل ہوتے جا رہے ہیں۔

اس مرتبہ اس عالمی تجارتی میلے میں مختلف براعظموں میں بیسیوں مختلف ممالک سے آنے والے کُل ساڑھے چھ ہزار سے زائد صنعتی نمائش کنندہ ادارے حصہ لے رہے ہیں اور مجموعی طور پر اس میلے کو دیکھنے کے لیے آنے والے ملکی اور غیر ملکی مہمانوں کی تعداد قریب دو لاکھ تک رہنے کی توقع ہے۔

Hannover Messe 2017 (picture-alliance/dpa/F. Gentsch)

یہ صنعتی نمائش کل پیر کے دن سے دنیا بھر سے آنے والے مہمانوں کے لیے کھول دی جائے گی

یہ میلہ کل پیر کی صبح سے صنعتی شعبے کی اہم شخصیات پر مشتمل مہمانوں کے لیے کھول دیا جائے گا۔ 24 سے 28 اپریل تک جاری رہنے والے امسالہ ہینوور صنعتی میلے میں کُل نمائش کنندگان میں سے 40 فیصد اداروں کا تعلق جرمنی سے ہے جبکہ باقی ماندہ قریب 60 فیصد ادارے بیرونی دنیا سے آ کر یہاں اپنی اپنی صنعتی مصنوعات کی نمائش کر رہے ہیں۔

DW.COM