1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ہٹلر کو ہولوکاسٹ کا قائل فلسطینی لیڈر نے کیا تھا، نیتن یاہو

اسرائیلی وزیر اعظم نیتن یاہو کو ان کے ’تاریخی حقائق کے برعکس‘ اس بیان کے باعث شدید تنقید کا سامنا ہے، جس کے مطابق ہٹلر شروع میں یہودیوں کا قتل عام نہیں چاہتا تھا مگر اس کو ہولوکاسٹ کا قائل ایک فلسطینی رہنما نے کیا تھا۔

Israel Benjamin Netanjahu

اسرائیلی وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو: ہولوکاسٹ کو فلسطینیوں سے جوڑنے کی کوشش پر تنقید کی زد میں

یروشلم سے بدھ اکیس اکتوبر کے روز موصولہ نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹوں کے مطابق اسرائیلی وزیر اعظم بینجمن نیتن یاہو نے اپنے اس بیان میں کہا کہ نازی جرمن آمر اڈولف ہٹلر نے یورپ سے یہودیوں کے خاتمے کے لیے ’آخری حل‘ کہلانے والے منصوبے پر عملدرآمد کی کوشش اس لیے کی کہ ہٹلر کو اس منصوبے کا قائل دوسری عالمی جنگ کے دور کے ایک فلسطینی رہنما نے کیا تھا۔

ایسوسی ایٹڈ پریس نے لکھا ہے کہ جدید یورپی تاریخ اور ہولوکاسٹ کے ماہرین کی طرف سے بینجمن نیتن یاہو کے اس غلط بیان پر یہ کہتے ہوئے شدید تنقید کی جا رہی ہے کہ اسرائیلی سربراہ حکومت نے تاریخی حقائق کو مسخ کرنے کی کوشش کی ہے۔

ناقدین نے آج بدھ کے روز کہا کہ نیتن یاہو کا یہ متنازعہ بیان ایک ایسے وقت پر آج کے فلسطینیوں کے خلاف اشتعال کو ہوا دینے کی کوشش ہے، جب کہ اسرائیل اور فلسطینیوں کے مابین حالیہ خونریز واقعات میں درجنوں ہلاکتوں کے باعث پہلے ہی کافی کشیدگی پائی جاتی ہے۔

اطلاعات کے مطابق بینجمن نیتن یاہو نے کل منگل کے روز یہودی رہنماؤں کے ایک گروپ سے ملاقات کے دوران کہا تھا کہ نازی دور میں ہٹلر کو یہودیوں کو تباہ کر دینے کا قائل یروشلم کے مفتی امین الحسینی نے کیا تھا، جو نیتن یاہو کے بقول نازیوں کے ہمدرد تھے۔

Überlebende Häftlinge des Konzentrationslagers Auschwitz nach der Befreiung 1945

دوسری عالمی جنگ کے دوران نازی اذیتی کیمپوں میں کئی ملین یہودیوں کو ہلاک کر دیا گیا تھا

اے پی کے مطابق اس ملاقات میں نیتن یاہو نے کہا، ’’اس وقت تک ہٹلر یہ نہیں چاہتا تھا کہ یہودیوں کا وجود ہی ختم کر دیا جائے۔ وہ صرف یہودیوں کو بےدخل کرنا چاہتا تھا۔‘‘ نیتن یاہو کے بقول جب ہٹلر نے یروشلم کے مفتی امین الحسینی سے یہ پوچھا کہ ’کیا کیا جانا چاہیے‘، تو الحسینی نے کہا تھا، ’’انہیں جلا دو۔‘‘

DW.COM

ملتے جلتے مندرجات