1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

مہاجرین کا بحران

ہزاروں مزید روہنگیا بنگلہ دیش کے راستے میں ہیں، اقوام متحدہ

اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ گزشتہ دو ماہ میں میانمار سے بنگلہ دیش ہجرت کرنے والے روہنگیا مسلمانوں کی تعداد قریب پانچ لاکھ نوے ہزار ہو گئی ہے، جبکہ ہزاروں روہنگیا مہاجر بنگلہ دیش کے راستے میں ہیں۔

اقوام متحدہ کے نائب ترجمان فرحان حق نے بتایا ہے کہ انسانی بنیادوں پر کام کرنے والے اہلکاروں کے مطابق مزید ہزاروں روہنگیا مہاجرین میانمار سے بنگلہ دیش ہجرت کر رہے ہیں۔ اس سے قبل سات ہزار مہاجرین بنگلہ دیش کی سرحد پر چار دن پھنسے رہے جس کے بعد اب انہیں ملک میں داخل ہونے کی اجازت دے دی گئی ہے۔

فرحان حق کا کہنا ہے کہ صرف کوتوپالونگ ہی کے مقام پر نصف سے زائد روہنگیا مہاجرین قیام کر رہے ہیں۔ اس مقام پر شاہراہوں تک رسائی، بنیادی ڈھانچے اور سہولیات کو بہتر بنانے کے لیے اقوام متحدہ ڈھاکہ حکومت کے ساتھ مل کر کام کر رہی ہے۔

دوسری جانب روہنگیا مسلمانوں کی امداد کے لیے وسائل متحرک کرنے کی غرض سے پیر 23 اکتوبر کو جنیوا میں ایک کانفرنس منعقد کی جا رہی ہے۔ کانفرنس کا مقصد فروری سن 2018 تک 1.2 ملین افراد کی امداد کے لیے 434 ملین ڈالر اکٹھے کرنا ہے۔

دو روز قبل اقوام متحدہ کے دو خصوصی مشیروں آڈاما ڈینگ اور ایوان سیمینووچ نے کہا تھا کہ میانمار کی حکومت ملکی ریاست راکھین میں روہنگیا مسلم اقلیت کو اس کے خلاف مظالم سے بچانے اور اس حوالے سے خود پر عائد ہونے والی بین الاقوامی ذمے داریاں پوری کرنے میں ناکام رہی۔

DW.COM