1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

ہالی وڈ کی فلموں میں سگریٹ نوشی کے مناظر میں کمی

گزشتہ پانچ سالوں میں ہالی وڈ کے اندر ایسی فلموں کی تعداد میں نمایاں کمی دیکھی گئی ہے، جس میں ہیروز کو متواتر سگریٹ نوشی کرتے ہوئے دیکھا جاتا ہے۔

default

ایک تازہ جائزے کے مطابق اس پیشرفت کے سبب امریکی نوجوانوں میں تمباکو نوشی کی جانب راغب ہونے کا رجحان نمایاں طور پر کم ہوا ہے۔ گزشتہ سال کے دوران 55 فیصد کامیاب فلموں میں سگریٹ نوشی کا کوئی بھی منظر شامل نہیں تھا۔ 2005ء میں ایک تہائی کامیاب فلموں میں سگریٹ نوشی والے مناظر دکھائے گئے تھے۔

Flash-Galerie Afghanistan Bollywood in Kabul

اب سگریٹ نوشی کو فلموں میں کم کم ہی جگہ دی جاتی ہے

یہ اعداد و شمار مرکز برائے بچاؤ اور انسداد امراض CDC کی رپورٹ میں پیش کیےگئے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق ان چھ سالوں میں ہالی وڈ کی نمایاں اور مشہور فلموں میں سگریٹ نوشی کے دو ہزار مناظر دکھائے گئے۔ گزشتہ سال فلموں میں سگریٹ نوشی کے مناظر میں جوکمی ریکارڈ کی گئی وہ اس ضمن میں گزشتہ دو دہائیوں میں سب سے بڑی ہے۔ ہائی اسکول جانے والے طالب علموں میں سگریٹ نوشی کی شرح میں دیکھی جانے والی کمی کو بھی اسی سے نتھی کیا گیا ہے۔

گزشتہ سال CDC ہی کی رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ 2000ء تا 2009ء کے دوران مڈل اسکول میں سگریٹ پینے والے طالب علموں کی شرح 11 فیصد سے 5 فیصد تک گر گئی تھی۔ اسی طرح ہائی اسکول کے طالب علموں میں بھی سگریٹ نوشی کا رجحان کم ہوا جو شرح کے اعتبار سے مڈل اسکول کے طالب علموں سے کم ہے۔ امریکہ میں چھ میں سے تین بڑی فلمساز کمپنیاں اسی پالیسی پر عمل پیراں ہیں کہ وہ اپنی فلموں میں سگریٹ نوشی سے متعلق مناظر نہیں دکھائیں گے۔

رپورٹ: شادی خان سیف

ادارت: عابد حسین

DW.COM