1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

گوانتانامو جیل سے چھ ایغور رہا

چین ان افراد کی حوالگی کا مطالبہ کرتا رہا ہے تاہم امریکہ کو ڈر ہے کہ ان افراد پر چین میں ریاستی تشدد کیا جاسکتا ہے اس لئے انہیں چین کے حوالے نہیں کیا جارہا۔

default

امریکہ نے گوانتاناموجیل کے چھ چینی قیدیوں کو مشرقی ایشیاء کے ایک چھوٹے سے جزیرے پالاؤ منتقل کردیا ہے۔ اس سے قبل بھی ایغور نسل ہی کے چار چینی شہریوں کو اس بدنام زمانہ حراستی مرکز سے برمودا منتقل کیا جاچکا ہے۔

چین ان افراد کی حوالگی کا مطالبہ کرتا رہا ہے تاہم امریکہ کو ڈر ہے کہ ان افراد پر چین میں ریاستی تشدد کیا جاسکتا ہے اس لئے انہیں چین کے حوالے نہیں کیا جارہا۔

کیوبا میں قائم اس حراستی مرکز میں سال 2002ء کے بعد سے قیدیوں کو رکھنے کا سلسلہ شروع ہوا۔

Taliban Gefangener in Guantanamo

گوانتانامو جیل میں قید زیادہ تر افراد کا تعلق افغانستان سے ہے۔

ان افراد پرسابق امریکی صدر جارج بش کی دہشت گردی کے خلاف جنگ کے دوران القاعدہ اورطالبان کے ساتھ تعلقات کے الزام میں مختلف ممالک سے گرفتار کیا گیا۔

اس حراستی مرکز میں قیدیوں کے ساتھ انسانیت سوز رویہ رکھے جانے کے شواہد سامنے آنے کے بعد عالمی سطح پر امریکہ پر شدید تنقید کی جاتی رہی ہے۔ جارج بش نے امریکی فوج کو عالمی دہشت گردی کے الزام میں کسی بھی غیر امریکی شہری کو اس حراستی مرکز میں غیر معینہ مدت کے لئے قید رکھنے کے اجازت دی تھی۔

گوانتا ناموبے میں مقید افراد میں سے زیادہ تر افغانستان سے گرفتار کئے گئے ہیں۔ یہاں قیدیوں کو رکھنے کے چار سال بعد یعنی سال دو ہزار چھ میں اُن کے بنیادی حقوق کو تسلیم کیا گیا۔

حالیہ برس کے آغاز میں نئے امریکی صدر باراک اس بدنام زمانہ حراستی مرکز کو جنوری سے قبل بند کرنے کا اعلان کرچکے ہیں۔

Norwegen USA Friedensnobelpreis 2009 für Barack Obama

امریکی صدر باراک اوبامہ ایک سال کے اندر اس بدنام زمانہ جیل خانے کو بند کرنے کا اعلان کرچکے ہیں

مبصرین کے بقول بہت سی سیاسی اور قانونی پیچیدگیاں ابھی بھی اوباما کی اس پالیسی کی راہ میں حائل ہیں۔

ہفتہ کے روز رہا گئے تمام چھ افراد کا تعلق چین کے مغربی مسلم اکثریتی والے علاقے سنکیانگ کی ایغور آبادی سے ہے۔ ان کی گرفتاری افغانستان پر سال دوہزار ایک میں امریکی حملے کے بعد عمل میں آئی تھی۔ دیگر قیدیوں کے برخلاف ان ایغور نسل کے چینیوں کو امریکہ کی جانب سے دشمن جنگجو قرارنہیں دیا گیا۔

امریکی حکومت گوانتا ناموبے جیل کے قیدیوں کو کسی ایسے تیسرے ملک میں منتقل کرنا چاہتی ہےجہاں سے انہیں گرفتار نہ کیا گیا ہو۔ ابھی بھی گوانتا ناموبے جیل میں دو سو پندرہ مزید قیدی موجود ہیں۔

رپورٹ: شادی خان

ادارت: عدنان اسحاق