1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

گائیوں کی ممتا: بچھڑوں کو بچانے کے لیے عورت کو مار ڈالا

سوئٹزرلینڈ میں حکام کے مطابق ایلپس کے پہاڑی سلسلے میں ’لاکس‘ کے سیاحتی تعطیلاتی مقام کے قریب ایک ستّتر سالہ جرمن خاتون سیاح کو ایک پہاڑی باڑے کی گائیوں نے اپنے بچھڑوں کو بچانے کی کوشش میں کُھروں تلے روند کر مار ڈالا۔

جرمن نیوز ایجنسی ڈی پی اے کی اتوار دو اگست کو ملنے والی رپورٹوں کے مطابق سوئس پولیس نے بتایا کہ ہلاک ہونے والی خاتون جرمن دارالحکومت برلن کی شہری تھی، جو چھٹیاں منانے کے لیے ایلپس کے پہاڑی سلسلے کے اس سوئس علاقے میں گئی ہوئی تھی۔

یہ خاتون سیاح بظاہر اس پہاڑی علاقے کے ایک کیبل کار اسٹیشن سے پہاڑوں ہی میں واقع ایک ریستوراں کی طرف جا رہی تھی کہ اپنا راستہ چھوٹا اور پیدل سفر کم کرنے کے لیے وہ ایک ایسے علاقے میں داخل ہو گئی، جسے باڑ لگا کر غیر متعلقہ افراد کے لیے بند کیا گیا تھا۔

یہ پہاڑی علاقہ دراصل ایک ایسا نجی باڑا تھا جہاں ایک مقامی کسان نے اپنی بہت سی گائیوں کو چرنے کے لیے کھلا چھوڑا ہوا تھا۔ پولیس کے مطابق اس جرمن خاتون نے جب ’شارٹ کٹ‘ استعمال کرتے ہوئے اس باڑے میں موجود گائیوں کے ریوڑ کے بیچ میں سے گزرنا چاہا، تو وہاں اپنے بچھڑوں کے ساتھ موجود یہ مویشی بدک گئے۔

سوئس پولیس کے اہلکاروں نے ہفتہ یکم اگست کو پیش آنے والے اس واقعے کے بارے میں ڈی پی اے کو بتایا، ’’یہ گائیں بظاہر خوف زدہ ہو کر اپنے بچھڑوں کو بچانے کی کوشش کر رہی تھیں اور اسی دوران انہوں نے اس بزرگ خاتون کو اپنے کُھروں تلے کچل ڈالا۔‘‘

اس واقعے کو اتفاق سے قریب ہی سے گزرنے والے ایک سائیکل سوار نے بھی دیکھا، جس نے فوراﹰ ہی حکام کو مطلع کر دیا۔ تھوڑی ہی دیر بعد اس خاتون کو بچانے کے لیے ایک مقامی ٹیم کے ساتھ ایک ڈاکٹر بھی موقع پر پہنچ گیا لیکن تب تک یہ زخمی خاتون اسی جگہ پر دم توڑ چکی تھی، جہاں گائیوں نے اسے کچل ڈالا تھا۔