1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

کیتھرین زیٹا جونز نفسیاتی مریضہ بن گئیں

ہالی وڈ کی معروف اداکارہ کیتھرین زیٹا جونز ذہنی تناؤ کا شکار ہونے کے بعد دماغی امراض کے ہسپتال میں علاج کے لیے داخل ہیں۔ ان کے اداکار شوہر مائیکل ڈگلس کی شدید بیماری کو بھی اُن کی اِس حالت کی ایک بڑی وجہ بتایا جا رہا ہے۔

default

اداکارہ کیتھرین زیٹا جونز

بدھ 14 اپریل کو کیتھرین زیٹا جونز کے ایک نمائندے نے میڈیا کو جاری کیے گئے ایک بیان میں بتایا ہے کہ گزشتہ برس مائیکل ڈگلس کی بیماری کے باعث کیتھرین غیر معمولی پریشانی کا شکار رہی تھیں۔ مائیکل ڈگلس کو گلے کے کینسر کا عارضہ لاحق ہو گیا تھا تاہم وہ علاج کے بعد کینسر کو شکست دینے میں کامیاب ہو گئے تھے۔

Berlinale Eröffnung Catherine Zeta-Jones und Michael Douglas

کیتھرین زیٹا جونز اپنے اداکار شوہر مائیکل ڈگلس کی بیماری سے شدید پریشان تھیں

41 سالہ کیتھرین زیٹا جونز کے نمائندے کے مطابق کیتھرین مالیخولیا یا Bipolar II کا شکار ہوگئی ہیں، جس کے علاج کے لیے وہ نفسیاتی امراض کے ہسپتال میں علاج کی غرض سے مختصر دورانیے کے قیام کے لیے داخل ہو گئی ہیں۔ اس بیان میں یہ وضاحت نہیں کی گئی ہے کہ وہ کس کلینک میں داخل ہیں اور انہیں یہ بیماری کب لاحق ہوئی تھی۔

Bipolar II کو پہلے مینک ڈپریشن (manic-depression)کے نام سے جانا جاتا تھا۔ جیسا کہ اِس نام سے ظاہر ہے، اس بیماری میں موڈ کبھی حد سے زیادہ خوش گوار ہو جاتا ہے اور خوشی کے احساس میں بے انتہا شدت آ جاتی ہے، اور کبھی انسان پر بے انتہا اداسی طاری ہو جاتی ہے۔ اس بیماری میں مختلف اوقات میں مختلف کیفیات پائی جاتی ہیں۔ اس بیماری میں موڈ یا طبیعت میں اچانک شدید جذبات غالب آ جانے کے باعث روز مرہ کے کاموں کی انجام دہی میں مشکلات پیدا ہو جاتی ہیں۔

کیتھرین کے نمائندے کا کہنا ہے کہ ان کی طبیعت اب پہلے سے بہتر ہے اور وہ اپنی دو آنے والی نئی فلموں کی عکسبندی کے لیے رواں ہفتے سے ہی کام کا آغاز کر دیں گی۔

رپورٹ: عنبرین فاطمہ

ادارت: امجد علی

DW.COM