1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

کیا القاعدہ کا رہنما ابو خباب المصری ہلاک ہوگیا ہے؟

جنوبی وزیرستان میں پیش آنے والے تازہ ترین امریکی میزائل حملے کے بعد افغان اور امریکی زرائع کا کہنا ہے کہ حملے میں القاعدہ کا رہنما مدہت مرصی السیّد عمر بھی ہلاک ہوگیا ہے۔

default

افغانستان سے ملحق پاکستان کے قبائلی علاقے وزیرستان میں امریکہ یک طرفہ فضائی حملے کرتا رہا ہے

ابو خباب المصری کے نام سے پہچانے جانے والا القاعدہ کے اس رہنما کے سر پر امریکی حکومت نے پانچ ملین ڈالر کی قیمت لگا رکھی تھی اور اس کوکیمیائی ہتھیاروں کی تیّاری کا ماہر سمجھا جاتا تھا۔


افواجِ پاکستان کے ترجمان میجر جنرل اطہر عبّاس نے کہا کہ المصری کی ہلاکت کی ابھی تصدیق نہیں کی جاسکتی ہے اور اس واقعے کی تفتیش جاری ہے۔ اعظم وارسک نامی گائوں میں یہ واقعہ پیش آیا ہے اور یہاں کے مکینوں کے مطابق امریکی حملے میں مرنے والے مقامی شہری تھے۔ امریکی حکومت نے اس حملے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے تاہم کہا ہے کہ المصری کی ہلاکت کا خیر مقدم کیا جائے گا۔


اس بارے میں پشاور سے ہمارے نمائندے فرید اللہ خان کا بھی یہی کہنا ہے کہ المصری کی ہلاکت کے بارے میں حتمی طور پر کچھ کہنا اس وقت ممکن نہیں ہے۔