1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

کوہل کی آخری رسومات: دعائیہ عبادات فرانس اور جرمنی میں ہونگی

جرمنی کے سابق چانسلر ہیلموٹ کوہل کی تدفین کے سلسلے کی آخری دعائیہ عبادت جرمن شہر سپائر میں ہو گی۔ سولہ برس چانسلر رہنے والے کوہل جمعہ سولہ جون کو انتقال کر گئے تھے۔

جرمن اخبار بلد اَم زونٹاگ کے مطابق ہیلموٹ کوہل کی آخری رسومات کی ادائیگی سے قبل فرانسیسی شہر اسٹراسبرگ اور اُن کے آبائی صوبے رائن لینڈ پلاٹینیٹ کے شہر سپائر میں خصوصی دعائیہ عبادات کا اہتمام کیا جائے گا۔

 اسٹراسبرگ میں موجود یورپی پارلیمنٹ میں منعقد ہونے والی دعائیہ تقریب کو ’یورپی سروس‘ کا خصوصی نام دیا گیا ہے۔ اس طرح ہیلموٹ کوہل کو براعظم یورپ کے استحکام کے لیے کی جانے والی ان کی خدمات کے اعتراف میں خراجِ عقیدت پیش کرنا ہے۔

یورپی کمیشن کے صدر ژاں کلود ینکر کا کہنا ہے کہ یورپی ریاستی قانون کے تحت ہیلموٹ کوہل کی آخری رسومات تمام سرکاری اعزازات کے ساتھ مکمل کی جائیں گی۔ یہ امر اہم ہے کہ کوہل کو براعظم یورپ کی اعزازی شہریت سے بھی نوزا گیا تھا۔ ینکر نے یہ بھی کہا کہ وہ اِس آخری رسومات کے عمل کی خود نگرانی کریں گے۔ بلڈ اَم زونٹاگ کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے یورپی کمیشن کے سربراہ نے  رحلت پا جانے والے بلند پایہ جرمن سیاستدان کوایک مرتبہ پھر شاندار الفاظ میں یاد کیا۔

Kaiserdom zu Speyer 039 (DW/Maksim Nelioubin)

کوہل کی آخری رسومات کی ایک دعائیہ تقریب سپائر کے مشہور کیتھڈرل میں منعقد کی جائے گی

اس عبادت کے بعد کوہل کے تابوت کو دریائے رائن کے ذریعے اسٹراس برگ سے رائن لینڈ پلاٹینیٹ کے شہر اسپائر منتقل کیا جائے گا۔ اسپائر کے مشہور کیتھڈرل میں ایک بڑی دعائیہ تقریب منعقد کی جائے گی۔ رومن کیتھولک عقیدے کے مطابق ہونے والی دعائیہ سروس میں عام لوگ بھی شریک ہو سکیں گے۔ امید کی جا رہی ہے کہ ان دونوں مذہبی تقریبات میں یورپ کی اہم شخصیات بھی شرکت کریں گی۔

تدفین کے موقع سے قبل کی آخری مذہبی تقریب انتہائی نجی رکھی گئی ہے اور اُس میں اُن کے خاندان اور قریبی دوست و احباب ہی شریک ہوں گے۔ یہ بھی اسپائر کے ایک چھوٹے چرچ میں ہو گی۔ اس وقت ہیلموٹ کوہل کی نعش سرکاری اعزاز کے ساتھ جرمن شہر لڈوِگ ہافن اوگرشائیم میں رکھی ہوئی ہے۔