1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

کن فلمی میلہ اور پولانسکی کی حمایت میں دستخطی مہم

فرانس کے سیاحتی قصبے کن میں سالانہ فلمی میلے کی رونقین اپنے عروج پر ہیں جو رواں ماہ کی تئیس تاریخ تک جاری رہیں گی۔

default

اس سلسلے کے 63 ویں میلے میں جہاں جہاں دنیا بھر سے چندہ فلمیں سینما کے پردے پر دیکھی جارہی ہیں وہی فلمی صنعت سے وابستہ مشہور شخصیات سے جڑی دیگر خبروں کا بھی چرچہ ہے۔ کن میں بہت سے فلم سازوں نے ایک ایسی پٹیشن پر اپنے نام لکھ دئے ہیں جو متنازعہ فلمساز رومن پولانسکی کی امریکہ منتقلی چاہتے ہیں۔ اپنے فن کے ماہر پولانسکی ان دنوں سوئٹزرلینڈ میں اپنے گھر میں قید ہیں کیوں کہ انہوں نے  1977ء میں ایک تیرہ سالہ بچی کے ساتھ جنسی تعلق کا اعتراف کررکھا ہے۔ ہالی وڈ کے مشہور ستارے مائیکل ڈگلس نے البتہ اس پٹیشن پر اپنا نام لکھنے سے انکار کردیا ہے۔

Der polnische Filmemacher Roman Polanski

رومان پولانسکی

ڈگلس کے بقول ہرچند کے وہ پولانسکی کے مداح ہیں تاہم وہ بطور امریکی ہرگز یہ پسند نہیں کریں گے کہ ایسے شخص کی حمایت میں اپنا نام لکھیں جس نے قانون کی خلاف ورزی کی ہو۔ ڈگلس کی فرانس میں منعقدہ اس میلے میں آمد کا مقصد اوولیور سٹون کی فلم Wall Street-Money Never Sleeps کی ترویج ہے۔

کن کے میلے کی عوامی دلچسپی کی ایک اور وجہ اطالوی وزیر اعظم سلویو بیرلسکونی کے حوالے سے بنائی گئی دستاویزی فلم Draquila: Italy Trembles ہے۔ سابینا گوزانتی نامی مزاح نگار نے اس فلم میں مائیکل موور کی طرز پر اطالوی وزیر اعظم کی مبینہ بدانتظامیوں کا احاطہ کیا ہے۔ بنیادی طور پر کن کے فلمی میلے میں بیس منتخب فلموں میں سے Palme d'Or یعنی Golden Palm کے اعزاز کے لئے بہترین فلم کا انتخاب کیا جاتا ہے۔ اس کے علاوہ بھی متعدد ضمنی مقابلوں میں متعدد طویل اور مختصر دورانئے کی فلمیں اور ڈاکومینٹریز نمائش کے لئے پیش کی جاتی ہیں۔

رپورٹ : شادی خان سیف ادارت : عدنان اسحاق

DW.COM