1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ڈونلڈ ٹرمپ سے اچھے تعلقات، پاکستانی وزارت خارجہ سرگرم

پاکستان کی بھرپور کوشش ہے کہ نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پاکستان کا دورہ کریں جبکہ پاکستانی وزیراعظم آئندہ ماہ ٹرمپ کی تقریب حلف برداری میں شرکت کے لیے واشنگٹن جا سکتے ہیں۔

پریس ٹرسٹ آف انڈیا نے میڈیا رپورٹوں کے حوالے سے لکھا ہے کہ پاکستانی وزیراعظم نواز شریف نومنتخب امریکی صدر ڈونلد ٹرمپ سے ملنا چاہتے ہیں اور اس مقصد کے لیے وہ آئندہ ماہ امریکا کا دورہ بھی کر سکتے ہیں۔ ان کے اس ممکنہ دورے کے بارے میں قیاس آرائیاں گزشتہ ہفتے ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ ہونے والی ٹیلی فونک گفتگو کے تناظر میں کی جا رہی ہیں۔

نواز شریف کا ڈونالڈ ٹرمپ کو تہنیتی فون، متن جاری

نیوز ایجنسی پی ٹی آئی اور پاکستان کے مقامی میڈیا کے مطابق خارجہ امور میں پاکستانی وزیراعظم کے معاون طارق فاطمی اتوار کے روز امریکا روانہ ہو رہے ہیں تاکہ وزیراعظم کے ممکنہ دورے کو حتمی شکل دی جا سکے۔ طارق فاطمی دس روز تک امریکا میں قیام کریں گے اور اس دوران وہ ٹرمپ کی انتظامی ٹیم سے بھی ملاقاتیں کریں گے۔ ان ملاقاتوں میں پاکستان اور امریکا کے تعلقات مضبوط بنانے پر غور کیا جائے گا۔

Nawaz Sharif Pakistan Premierminister spricht in Frankreich (Getty Images/A.Jocard)

پاکستانی وزیراعظم آئندہ ماہ ٹرمپ کی تقریب حلف برداری میں شرکت کے لیے واشنگٹن جا سکتے ہیں

بتایا گیا ہے کہ فاطمی نو منتخب صدر کی ٹیم کو پاکستان کے دہشت گردی کے خلاف کردار جبکہ افغانستان اور بھارت کے لیے پاکستانی خارجہ پالیسی سے آگاہ کریں گے۔

میڈیا رپورٹوں کے مطابق پاکستانی وزارت خارجہ ڈونلڈ ٹرمپ اور پاکستانی وزیراعظم نواز شریف کے مابین ملاقات طے کرنے کی کوششوں میں ہے۔ نیوز ایجنسی پی ٹی آئی نے اپنے ذرائع کے حوالے سے لکھا ہے کہ پاکستانی وزیراعظم نواز شریف، ٹرمپ کی بطور صدر تقریب حلف برداری میں شرکت کرنے کی خواہش رکھتے ہیں۔

واشنگٹن میں پاکستانی سفارت خانے کی طرف سے بھی ایسی کوششوں کا آغاز کر دیا گیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ نواز شریف اٹھارہ یا انیس جنوری کو امریکا جا سکتے ہیں لیکن وہ یہ دورہ اسی صورت میں کریں گے اگر ان کی نئے امریکی صدر سے ملاقات طے پا گئی۔

ٹرمپ پہلے ہی اپنی عارضی ٹیم کو احکامات جاری کر چکے ہیں کہ وہ غیر ملکی رہنماؤں کی حوصلہ افزائی کریں کہ وہ نیویارک میں ان کے ہیڈکوارٹرز میں ان سے تعارفی ملاقاتیں کریں۔

طارق فاطمی اپنے دورے کے دوران امریکی کانگریس اور سینیٹ کے اراکین سے ملاقاتیں بھی کریں گےتاکہ نئی امریکی انتظامیہ کے ساتھ بہتر تعلقات کے لیے ان کی حمایت حاصل کی جا سکے۔ پاکستانی مشیر امریکی تھنک ٹینک کے اراکین سے بھی ملیں گے تاکہ انہیں خطے میں پاکستان کی طرف سے کی جانے والی امن کی کوششوں کے بارے میں آگاہ کیا جا سکے۔

DW.COM