1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

چیف سلیکٹر محسن خان کے سامنے چیلنج

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے نئے چیف سلیکٹر محسن خان کے سامنے سب سے پہلا اور مشکل چیلنج ویسٹ انڈیز میں اپریل کے اواخر میں شروع ہونے والے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ ٹورنامنٹ کے لئے پندرہ رکنی سکواڈ کا انتخاب ہے۔

default

چیف سلیکٹر محسن خان

پاکستان کرکٹ ٹیم کے ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ سکواڈ کا اعلان آئندہ ہفتے تک متوقع ہے۔

Waqar Younis Pakistan Trainer

پاکستان ٹیم کے نئے کوچ وقار یونس

آسٹریلیا میں تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز، پانچ میچوں پر مشتمل ون ڈے سیریز اور ایک ٹی ٹوئنٹی میچ ہارنے کے بعد پاکستان کرکٹ میں کچھ اہم تبدیلیاں کی گئیں۔ ان میں سابق ٹیسٹ کرکٹر اور کپتان وقار یونس کی بحیثیت کوچ تقرری اور محسن خان کا چیف سلیکٹر بننا شامل ہیں۔ ٹی ٹوئنٹی کی عالمی چیمپیئن پاکستانی کرکٹ ٹیم کیریبین میں اپنے اعزاز کا دفاع کرے گی۔ شاید اسی وجہ سے محسن خان کے لئے پندرہ رکنی سکواڈ تشکیل دینے کا کام اتنا آسان نہیں ہوگا۔

Abdul Razzaq

ورلڈ کلاس آل راوٴنڈر عبدالرزاق

تیس رکنی عبوری سکواڈ میں پندرہ کھلاڑیوں کو ڈراپ کر کے حتمی سکواڈ تشکیل دیا جائے گا۔ حتمی دستے میں بوم بوم آفریدی، ورلڈ کلاس آل راوٴنڈر عبدالرزاق، ہونہار نوجوان بیٹسمین عمر اکمل، نوجوان فاسٹ بولر محمد عامر، مڈل آرڈر بلے باز فواد عالم، پیسر محمد آصف اور ٹی ٹوئنٹی فارمیٹ کے ماہر گیندباز عمر گل کی شمولیت کے امکانات روشن ہیں۔

چیف سلیکٹر محسن خان 1980ء کے دوران پاکستان ٹیم کے سٹائلش اوپننگ بلے باز تھے۔ کرکٹ کیریئر کے بعد محسن خان نے بھارتی فلمی صنعت بالی وُڈ میں بھی اپنی قسمت آزمائی، لیکن جتنی کامیابی انہیں کرکٹ کی پچ پر حاصل ہوئی، فلم کی دنیا میں وہ اتنے کامیاب نہ ہو سکے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اقبال قاسم کے استعفے کے بعد محسن خان کو نیا چیف سلیکٹر مقرر کیا۔ آسٹریلیا کے انتہائی ناکام دورے کے بعد قاسم اخلاقی بنیادوں پر اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے تھے، تاہم بورڈ کے چیئرمین اعجاز بٹ اب بھی اپنے عہدے پر فائز ہیں۔

رپورٹ: گوہر نذیر گیلانی

ادارت: مقبول ملک

DW.COM