1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

چار ہزار گائیں ہوائی جہاز سے قطر پہنچیں گی

قطر کے ایک تاجر دودھ دینے والی چار ہزار گائیوں کو ہوائی جہاز کے ذریعے قطر پہنچائیں گے تاکہ سعودی عرب اور دیگر ممالک کی جانب سے دودھ کی فراہمی کی بندش سے قطری عوام متاثر نہ ہوں۔

بلوم برگ نیوز ایجنسی کی ایک رپورٹ کے مطابق قطر ایئر ویز کی 60 خصوصی پروازوں کے ذریعے دودھ دینے والی گائیوں کو قطر پہنچایا جائے گا۔ قطر کے تاجر موتاز ال خیاط نے یہ گائیں امریکا اور آسٹریلیا میں خریدیں تھیں۔  بلوم برگ کو بتایا،’’ یہ وہ وقت ہے جب قطر کے لیے کام کرنے کی ضرورت ہے۔‘‘ اس رپورٹ کے مطابق  ال خیاط کا بنیادی کاروبار تعمیرات کا ہے۔ ان کی کمپنی نے قطر کا سب سے بڑا شاپنگ مال تعمیر کیا تھا۔ یہ کمپنی اب دوحہ کے شمال سے 31 میل دور ایک بہت بڑا ذرعی فارم بنا رہی ہے۔

بلوم برگ کی رپورٹ کے مطابق اس فارم سے بکریوں کا دودھ اور گوشت حاصل کیا جا رہا ہے اور یہاں سمندری راستے کے ذریعے گائیوں کو برآمد کرنے کا منصوبہ بنایا گیا تھا۔ لیکن  جب سے قطر کو حالیہ بحران کا سامنا کرنا پڑا ہے تو گائیوں کو قطر جلد پہنچانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ال خیاط کا کہنا ہے کہ اس ماہ کے آخر تک ان گائیوں کا دودھ قطر کی مارکیٹوں میں پہنچنا شروع ہو جائے گا۔

سفارتی بحران کا شکار قطر کی خلیجی ریاست، چند اہم حقائق

خوراک سے بھرے ایرانی طیارے قطر پہنچ گئے

سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین ، مصر اور چند دیگر ممالک نے قطر سے سفارتی تعلقات منقطع کر دیے ہیں۔ ان ممالک کی جانب سے قطر پر دہشت گردوں کی حمایت کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ قطر نے ان الزامات کو مسترد کیا ہے۔ سفارتی تعلقات کی بندش کے بعد سے قطر کو دودھ اور کچھ دیگر اشیائے خورد نوش کی کمی کا سامنا ہے۔ ترکی اور ایران کی جانب سے قطر کو کھانے پینے کی اشیائے بھجوائی جا رہی ہیں۔

DW.COM