1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

چائے اور کافی ’امراض قلب سے بچاتی ہیں‘

ہالینڈ کے سائنسدانوں نے اپنی 13 برس پر محیط ایک تحقیق کے بعد کہا ہے کہ دن میں متعدد مرتبہ چائے یا کافی پینے سے انسان ، عارضہ قلب سے قدرے محفوظ رہتا ہے۔ یہ تحقیق چالیس ہزار افراد کے تجزیے کی بنیاد پر مرتب کی گئی ہے۔

default

اس تحقیق میں چائے اور کافی کے استعمال سے جسم پر پڑنے والے مثبت اثرات کو موضوع بنایا گیا ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایسے افراد، جو دن میں چھ کپ چائے یا کافی کا استعمال کرتے ہیں، ان کو دل کے دورے سے اچھا خاصا تحفظ حاصل ہو جاتا ہے۔

Kaffeebohnen aus dem Verdauungstrakt von Zibetkatzen

یورپ میں کم دودھ والی کافی کا استعمال کیا جاتا ہے

چالیس ہزار افراد میں سے ایک تہائی افراد میں دل کے دورے کے رسک میں دنیا کے ان مقبول ترین گرم مشروبات کی وجہ سے تحفظ دیکھا گیا۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ دو سے چار کپ چائے پینے والوں میں بھی دل کے دورے سے یہ تحفظ دیکھا گیا ہے۔

رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ چار سے زائد کپ چائے پینے والوں میں سٹروک اور کینسر کے خلاف بھی مدافعت میں قدرے اضافہ ہو جاتا ہے۔ ڈچ باشندے کافی میں انتہائی کم دودھ جبکہ چائے بغیر دودھ کے استعمال کرتے ہیں۔ اس حوالے سے متضاد رپورٹیں ہیں کہ آیا چائے یا کافی میں دل کے دورے سے تحفظ دینے والا مادہ پولی فینولز دودھ کے اجزاء سے پیدا ہوتا ہے یا نہیں۔

Senseo Kaffemaschine

چائے اور کافی کا استعمال دیگر بیماریوں کے خلاف بھی مدافعت پیدا کرتا ہے

اس سے قبل سائنسدانوں کا خیال تھا کہ کافی مختلف افراد میں مختلف رویے کا مظاہرہ کرتی دیکھی گئی ہے، یعنی کہیں تو اس کے استعمال سے دل کے دورے میں 20 فیصد تک کمی دیکھی گئی اور کہیں اضافہ بھی۔ سائنسدان یہ بھی کہتے رہے ہیں کہ ایک طرف چائے اور کافی اگر دل کے دورے سے بچاؤ میں مدد دیتی ہیں تو دوسری طرف ان کے زیادہ استعمال سے دیگر بیماریوں کے لاحق ہونے کے امکانات میں بھی اضافہ ہوتا ہے۔ تاہم اس سائنسی رپورٹ میں واضح طور پر کہا گیا ہے کہ چائے یا کافی کے استعمال سے کسی دیگر بیماری میں مبتلا ہونے کا کوئی ثبوت سامنے نہیں آیا۔

اس تحقیقی ٹیم کے سربراہ پروفیسر یوونے فان دیئر شوؤو کے مطابق چائے یا کافی کا استعمال کرنے والے افراد کے لئے یہ ایک اچھی خبر ہے، ’’بنیادی طور پر یہ ایک خوشخبری ہے کہ آپ کو چائے یا کافی پسند ہے تو آپ پی سکتے ہیں۔ ان مشروبات سے فائدہ ملتا ہے، صرف دل کے دورے کے نتیجے میں ہلاک ہونے کے رسک سے تحفظ ہی نہیں دیگر بیماریوں سے بھی۔‘‘

رپورٹ: عاطف توقیر

ادارت :عاطف بلوچ

DW.COM