1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

پی آئی اے اب جرمنی سے پرواز کرے گی

پاکستان کی قومی ایئر لائن اب جرمن شہر لائپزگ سے مسافروں کو پاکستان پہنچائے گی۔ پی آئی اے کی فلائٹس ہفتے میں دو مرتبہ اب سپین کے شہر بارسلونا سے بھی پروازیں کریں گی۔

پی آئی اے کے ترجمان دانیال گیلانی نے ڈی ڈبلیو سے خصوصی بات چیت کرتے ہوئے بتایا کہ پی آئی اے کی انتظامیہ جرمن شہر لائپزگ کی ایئرپورٹ کے حکام سے بات چیت کر رہی ہے اور توقع ہے کہ سن 2017 کے آغاز سے جرمنی سے پاکستان کے لیے پروازوں کا سلسلہ دوبارہ سے شروع ہو جائے گا۔

دانیال گیلانی کے مطابق پی آئی اے کی نیورک جانے والی پرواز لندن کے شہر مانچسٹر میں رکتی ہوئی نیویارک پرواز کرتی تھی لیکن اب یہ فلائٹ لائپزگ میں سٹاپ اوور کرتے ہوئے نیو یارک جائے گی۔ اسی طرح جرمنی کے لائپزگ ایئرپورٹ سے مسافر پاکستان بھی جا سکیں گے۔ توقع ہے کہ جرمنی سے ہر ہفتے پاکستان کے لیے دو پروازیں روانہ ہوا کریں گی۔ دانیال گیلانی نے ڈی ڈبلیو کو بتایا،’’جرمنی نے پی آئی اے کو ’ففتھ فریڈم رائٹس‘ دیے ہوئے ہیں جس کے تحت اب مسافروں کے علاوہ ہم کارگو سامان بھی اپنی فلائٹس کے ذریعے لے جا سکیں گے۔‘‘

پی آئی اے کے ترجمان نے بتایا کہ ماضی میں پی آئی اے کی پروازیں اسپین کے شہر بارسلونا سے اڑتی تھیں لیکن پھر یہ سلسلہ بند کر دیا گیا تھا۔ اب اس برس کے کے اختتام سے قبل پروازوں کا یہ سلسلہ ایک مرتبہ پھر شروع ہو جائے گا۔

دانیال گیلانی کا کہنا ہے کہ یورپ ایک اہم خطہ ہے یہاں بہت سے پاکستانی رہائش پذیر ہیں اور تاجر بھی باقاعدگی سے یورپ کے مختلف ممالک میں سفر کرتے ہیں اس لیے یورپ کے مختلف ممالک سے پی آئی ای کی پروازوں کا آغاز کرنا اہم ہے۔ واضح رہے کہ پی آئی اے کے نئے سی ای او کا تعلق جرمنی سے ہے۔ وہ لفتھانزا ایئر لائن میں 40 برس کام کرچکے ہیں۔

DW.COM