1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

پوپ آزاد فلسطینی ریاست کے حق میں

اپنے دورے کے دوران علٰیحدہ فلسطینی ریاست کے قیام کی حمایت کرنے والے پوپ نے تمام فریقین سے اپیل کی ہے کہ وہ خطّے میں پائیدار اور مستقل امن کے لئے اپنا اپنا کردار ادا کریں۔

default

پوپ فلسطین میں گارڈ آف آنر کا معائنہ کرتے ہوئے

پاپائے روم بینیڈیکٹ شانزدہم اپنا دورہء مشرق وسطیٰ جاری رکھے ہوئے ہیں۔

مقبوضہ مغربی کنارے کے اپنے پہلے دورے پر پاپائے روم نے مسلح نوجوانوں سے تشّدد کے راستے کو ترک کرنے کی اپیل کے ساتھ ساتھ اس امید کا اظہار بھی کیا کہ غزہ پٹی پر عائد تمام پابندیاں ختم کردی جائیں گی۔ پوپ نے بین الاقوامی برادری سے مطالبہ کیا کہ وہ خودمختار فلسطینی ریاست کے قیام کے سلسلے میں اپنا مثبت کردار ادا کرے۔

Palästinensische Flüchtlingskinder im Flüchtlingscamp Aida nahe Bethlehem warten auf Papst Benedikt

کیا پوپ کا دورہِ مشرقِ وسطیٰ آزاد فلسطینی ریاست کا ضامن بن سکے گا؟

حضرتِ عیسیٰ کی جائے پیدائش بیت الحم میں پوپ کا شاندار استقبال کیا گیا۔ استقبالی تقریب کے موقع پر پوپ نے کہا، وہ چاہتے ہیں کہ فلسطینی باشندے ایک ایسی ریاست میں رہیں، جو ہر لحاظ سے خودمختار ہو اور جو امن اور خیرسگالی کا جذبہ لئے اپنے ہمسایہ ملکوں کے ساتھ دوستی کے ماحول میں ترقی کی راہ پر گامزن ہو۔

اسرائیل میں نیتن یاہو کی حکومت ابھی تک علٰیحدہ فلسطینی ریاست کے قیام کے حق میں نہیں ہے۔ نیتن یاہو سخت گیر موقف کے حامل سیاست دان تصور کئے جاتے ہیں اور بیشتر تجزیہ کاروں کی رائے میں جب تک وہ اقتدار میں رہیں گے، تب تک خطّے میں مستقل امن کا قیام مشکل ہے۔

Papst Benedikt vor der Klagemauer in Israel Jerusalem

پوپ یروشلم میں

پوپ کا مشرقِ وُسطےٰ کا یہ دورہ آٹھ روز پر مشتمل ہے۔ اِس پورے خطّے کے لئے امن کا پیغام دینے والے پاپائے روم نے کہا کہ یہاں تمام مذاہب کے پیروکاروں کو کئی دہائیوں سے چلی آرہی کشیدگی کے خاتمے کے لئے مثبت کردار ادا کرنا ہوگا۔

فلسطینی علاقوں، غزہ اور مغربی کنارے کے باشندوں سے پوپ نے کہا کہ وہ اپنے دلوں کے اندر موجود شکایتوں کو مزید معصوم جانیں ضائع کرنے کے لئے استعمال نہ کریں بلکہ امن اور آشتی کے لئے اپنا کردار ادا کریں تاکہ آنے والی نسلوں کو ان پریشانیوں اور تکلیفوں کا سامنا نہ کرنا پڑے، جن کا انہیں خود تجربہ ہوا ہے۔

اسرائیلی دارالحکومت یروشلم سے بیت الحم کے سفر کے دوران پوپ نے جگہ جگہ اُس دیوارکو خود دیکھا، جو اسرائیل نے مغربی کنارے میں تعمیر کی ہے۔ بیت الحم کے پناہ گزین کیمپ پر بیاسی سالہ پوپ نے فلسطینی انتظامیہ کے صدر محمود عباس سے بھی ملاقات کی۔