1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

’پاکستان امریکہ کا سب سے بڑا اتحادی ہے‘

امریکہ نے کہا ہے کہ دہشت گردی کے خلاف کوششوں میں پاکستان سے بڑھ کر اس کا کوئی حلیف نہیں۔ واشنگٹن حکام نے یہ بات پاکستان اور امریکہ کے درمیان تین روزہ سٹریٹیجک مذاکرات کے اختتام پر کہی۔

default

ہلیری کلنٹن اور شاہ محمود قریشی

Pakistanischer Armeechef Ashfaq Kayani

پاکستان کے آرمی چیف جنرل اشفاق پرویز کیانی

پاکستان اور امریکہ کے مابین سٹریٹیجک مذاکرات کا یہ تیسرا دَور تھا، جو واشنگٹن میں جمعہ کو اختتام پذیر ہوا۔ اس اجلاس میں شریک پاکستانی وفد میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور آرمی چیف جنرل اشفاق پرویز کیانی شامل تھے۔ تین روزہ نشستوں کے دوران عسکری اور اقتصادی تعاون، زراعت اور بنیادی ڈھانچے کی تعمیر سمیت متعدد معاملات پر غور کیا گیا۔

جمعہ کو ان مذاکرات کے آخری روز امریکہ نے پاکستان کے لئے دو ارب ڈالر کی عسکری امداد کا اعلان بھی کیا، جس کا مقصد وہاں شدت پسندوں کے خلاف لڑائی میں تعاون فراہم کرنا ہے۔

اس امداد کا اعلان کرتے ہوئے امریکی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن نے کہا، ’دہشت گردی، پاکستان اور امریکہ کے لئے مشترکہ خطرہ ہے اور اس کے خلاف کوششوں کے حوالے سے پاکستان سے بڑھ کا امریکہ کا کوئی حلیف نہیں۔‘

یہ امداد 2012ء سے 2016ء کے عرصے میں دی جائے گی۔ امریکہ پہلے بھی پاکستان کو عسکری امداد کی مَد میں ایسا ہی ایک پیکیج دے رہا ہے، جو نئی معاونت میں شامل کر دیا جائے گا۔

امریکہ ایک علیٰحدہ پروگرام کے تحت پاکستان کو ساڑھے سات ارب ڈالر کی ترقیاتی امداد بھی دے رہا ہے۔ قبل ازیں جمعرات کو امریکہ نے پاکستان کے لئے معاونت بڑھانے کا عندیہ دیا تھا۔ امریکی حکام نے یہ بھی کہا تھا کہ عسکری آلات کے لئے پاکستانی درخواست کا جائزہ بھی لیا جائے گا۔

Richard Holbrooke

امریکی مندوب رچرڈ ہالبروک

پاکستان اور افغانستان کے لئے امریکی مندوب رچرڈ ہالبروک کا کہنا تھا کہ وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن نے کسی بھی ملک کے مقابلے میں پاکستان کے لئے زیادہ وقت وقف کر رکھا ہے اور وہ دونوں ممالک کے درمیان عدم اعتماد کی فضا کے خاتمے کے لئے کوشاں ہیں۔

مذاکرات کے پہلے روز بدھ کو امریکی صدر باراک اوباما نے بھی پاکستانی وفد سے ملاقات کی، جس میں انہوں نے آئندہ برس دورہ پاکستان کے ساتھ پاکستانی صدر آصف زرداری کو واشنگٹن مدعو کرنے کا ارادہ بھی ظاہر کیا۔ بدھ ہی کو پاکستان کے آرمی چیف جنرل اشفاق پرویز کیانی نے بھی امریکی وزیر دفاع رابرٹ گیٹس سے ملاقات کی۔

رپورٹ: ندیم گِل

ادارت: عاطف توقیر

DW.COM

ویب لنکس