1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

ٹوکیو پر ویرانی کا سایہ

عام طور پر جاپان کے دارالحکومت ٹوکیو کے مختلف علاقوں کے سوشی ریستوران اور نوڈلز شاپس شہر بھر کے دفاتر میں کام کرنے والوں سے کچھاکھچ بھری ہوا کرتی تھیں۔ لیکن اب یہ علاقےپُر اسرار خاموشی کا منظر پیش کر رہے ہیں۔

default

جاپانی حکام زلزلے سے متاثر، ٹوکیو سے 240 کلو میٹر دورواقع جوہری کمپلیکس میں رونما ہونے والے دھماکوں کے بعد تابکاری شعاعوں کو کنٹرول کرنے میں مصروف ہیں تا کہ سویلین کوخطرناک صورت حال سے بچایا جا سکے۔ تابکاری شعاعوں کے ممکنہ خطرے کی وجہ سے ٹوکیو شہر کسی ویرانے کا منظر پیش کر رہا ہے۔ لوگ پریشان حال اور بازار اجڑے ہوئے ہیں۔

Japan Erdbeben Tsunami Atomreaktor

ٹوکیو کی ایک سپر مارکیٹ کے باہر راشن جمع کرنے کے لئے آنے والے افراد

شہر کے کئی باسی یا تو کئی دنوں کا راشن جمع کر کے گھروں میں مقید ہو گئے ہیں یا پھر گھر بار چھوڑ کر محفوظ شہروں کا رخ کر چکے ہیں۔ اس باعث دنیا کے سب سے بڑے اور گنجان ترین آبادی رکھنے والا یہ شہر غیر معمولی طور پر ویران بلکہ گھوسٹ سٹی کا منظر پیش کر رہا ہے۔

شہریوں کو فوکوشیما کےجوہری بجلی گھر میں ہونے والے دھماکوں اور اس نتیجے میں پھیلنے والی تابکاری شعاعوں کے پھیلنے کے خوف نے اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے۔ تاہم اس جوہری بجلی گھر کے اطراف چلنے والی ہواوں کے جھکڑ وں نے اب سمندر کی جانب رخ کر لیا ہے۔اس کے علاوہ جوہری پلانٹ میں منگل کے روز ہونے والے ہائیڈروجن دھماکے کے بعد ٹوکیو میں ریڈیشن کی سب سے زیادہ سطح جو ریکارڈ کی گئی وہ بظاہر عام سطح سے تین گنا زیادہ ضرور تھی لیکن یہ انسانی زندگی کے لیے کسی خطرہ کا سبب نہیں بن سکتی۔ ماہرین کی اس رائے کے باوجود ٹوکیو کے باسی اس حوالے سے اپنی پریشانی کم کرنے کے لیے تیار نہیں ہیں۔

Tokio Ausreise Atom Erdbeben Evakuierung

تابکاری سے متاثر ہونے کے خطرے کے باعث کئی افراد شہر سے باہر نکلنے کے لئے ایئر پورٹ پر جمع ہیں

43 سالہ امریکی سٹیون سوانسن گزشتہ سال دسمبر میں اپنی بیوی کے ساتھ ٹوکیو منتقل ہوئے تھے۔ ٹوکیو میں چھائی خوف کی اس فضاٴ کے حوالے سے وہ کہتے ہیں، " ریڈی ایشن کی رفتار ہم سے زیادہ تیز ہوتی ہے"۔ وہ مزید کہتے ہیں کہ وہ اپنے گھر کے اندر مقید ہیں تاہم اب وہ ٹوکیو سے باہر نکلنا چاہتے ہیں۔وہ کہتے ہیں، " یہ بہت خوف زدہ کرنے والے حالات ہیں۔ ہم زلزلے، سونامی اور ریڈی ایشن کے اخراج کے ساتھ تین طرح کے خطرات کا سامنا کر رہے ہیں۔ اب ہم سوچ رہے ہیں کہ اس کے بعد اب کیا ہو گا"۔

ادھرٹوکیو میں حالیہ آفات کے بعد کئی بڑی تقریبات بھی منسوخ کر دی گیئں جس میں جاپان فیشن ویک، ورلڈ فگر اسکیٹنگ چیمپئین شپ اور ٹوکیو انٹر نیشنل Anime فیئر بھی شامل ہے۔

رپورٹ: عنبرین فاطمہ

ادارت: عابد حسین

DW.COM