1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

ٹوئنٹی ٹوئنٹی سیریز جنوبی افریقہ کے نام

جنوبی افریقہ نے ابوظہبی میں کھیلی گئی دو ٹوئنٹی ٹوئنٹی میچوں کی سیریز میں پاکستان کو دو صفر سے شکست دے دی ہے۔ دوسرا میچ بھی جنوبی افریقہ نے چھ وکٹوں سے جیتا۔

default

اوپنر گریم سمتھ نے اڑتیس رنز بنائے

ابو ظہبی کے شیخ زید سٹیڈیم میں کھیلے گئے اس سیریز کے دوسرے اور آخری میچ میں بھی پاکستانی کپتان شاہد آفریدی نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا تاہم اپنی حریف ٹیم کو کوئی خاص اور مناسب ہدف دینے میں ان کی ٹیم ناکام رہی۔

پاکستان کی ساری ٹیم مقررہ بیس اوورز میں نو وکٹوں کے نقصان پر صرف 120 رنز ہی بنا سکی۔ اس میچ میں بھی پاکستان کی طرف سے نمایاں بلے باز مصباح الحق رہے، جنہوں نے اڑتیس گیندوں پر33 رنز بنائے۔ دیگر کھلاڑیوں میں عبدالرزاق نے پچیس، وکٹ کیپر بیٹمسن ذوالقرنین حیدر نے سترہ جبکہ محمد حفیظ نے چودہ رنز بنائے۔

Abdul Razzaq

عبدالرزاق نے اپنے روایتی انداز میں کھیلتے ہوئے پچیس رنز بنائے

جنوبی افریقہ کی طرف سے کامیاب ترین بولر تھیرون رہے، جنہوں نے چار اوورز میں ستائیس رنز کے عوض چار کھلاڑیوں کا آؤٹ کیا۔ گزشتہ میچ میں عمدہ بولنگ کرنے والے سیاہ فام فاسٹ بولر ٹسوبے نے اس میچ میں بھی اعلیٰ بولنگ کا مظاہرہ کیا اور دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جبکہ مورکل برادران نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

جب جنوبی افریقہ نے ایک آسان ہدف کا تعاقب شروع کیا تو اوپنر گریم سمتھ نے اپنی ٹیم کو ایک اچھا آغازمہیا کیا، انہوں نے 38 رنز بنائے۔ گزشتہ میچ میں عمدہ کھیل دکھانے والے جے پی ڈومینی اور کولن انگرام نے اس مرتبہ بھی اچھی اننگز کھیلی، انہوں نے بالتریب بیس اور اکتیس رنز بنائے۔

پاکستانی سپنرز نے اچھی بولنگ کی تاہم جنوبی افریقہ نے ایک آسان ہدف بغیر کسی بڑی مشکل کے حاصل کر لیا۔ جنوبی افریقہ نے 125 رنز بنائے اوراس کے صرف چار کھلاڑی ہی آؤٹ ہوئے۔ پاکستان کی طرف سے شاہد آفریدی، شعیب اختر، محمد حفیظ اور سعید اجمل نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

میچ کے بہترین کھلاڑی جنوبی افریقہ کے تھیرون جبکہ سیریز کے بہترین کھلاڑی جنوبی افریقہ کے ان میچوں کے لئے کپتان بوتھا قرار پائے۔

پاکستان اورجنوبی افریقہ اس سیریز کے دوران پانچ ایک روزہ میچ اوردو ٹیسٹ میچ بھی کھیلیں گے۔ پہلا ون ڈے میچ ابو ظہبی کے شیخ زید سٹیڈیم میں انتیس اکتوبر کو کھیلا جائے گا۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: عابد حسین

DW.COM