1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

ومبلڈن: کویتووا نے شرواپوا کو شکست دے دی

ہفتے کے روز ومبلڈن ٹینس چیمپیئن شپ کے سلسلے میں خواتین کے مقابلوں کے فائنل میں چیک جمہوریہ کی پیٹرا کویتووا نے سابق عالمی چیمپیئن ماریہ شرواپوا کو سینٹر کورٹ میں شکست دے کر ومبلڈن کا ٹائٹل اپنے نام کر لیا ہے۔

default

شرواپوا کے پورے کیریئر میں یہ پہلا موقع تھا کہ انہیں اس حد تک طاقتور حریف کا سامنا کرنا پڑا۔ کویتووا نے یہ مقابلہ چھ تین اور چھ چار سے با آسانی جیت لیا۔ سن 2004ء کی عالمی چیمپیئن اور سابق عالمی نمبر ایک شرواپوا کے خلاف نوجوان پیٹراکویتووا کے انتہائی طاقتور اسٹروکس نے کھیل کے آغاز سے اختتام تک مقابلے کو یک طرفہ بنائے رکھا۔

اس میچ کو دیکھنے والوں میں شرواپواا کے منگیتر Sasha Vujacic بھی شامل تھے، جو تمام کھیل کے دوران متعدد مرتبہ انہتائی بے چینی کا شکار بھی دکھائی دیے۔ Sasha Vujacic خود NBA کے کھلاڑی ہیں۔ شرواپوا جو اپنی طاقتور سروس اور اسٹروکس کی وجہ سے مشہور ہیں، کویتووا کی شارٹس کے سامنے مکمل طور پر بے بس نظر آئیں۔

Tennis Wimbledon Sabine Lisicki Maria Sharapova Flash-Galerie

شرواپوا کویتووا کے طاقتور اسٹروکس کا مقابلہ نہ کر پائیں

سن 1990ء میں پیدا ہونے والی کویتووا نے میچ کے بعد اپنے انٹرویو میں اپنے عمومی دھیمے لہجے میں کہا کہ انہیں معلوم تھا کہ اس میچ میں پوری جان صرف کیے بغیر جیتنا ممکن نہیں تھا، لہذا انہوں نے پوری کوشش کی۔

’’یہ ناقابل یقین موقع ہے۔ میں انتہائی خوش ہوں۔ مجھے اس وقت کچھ سمجھ نہیں آ رہا کیونکہ یہ ایک بالکل اچھوتا احساس ہے۔‘‘

آٹھویں نمبر کی عالمی کھلاڑی کویتووا گزشتہ برس ومبلڈن گرینڈ سلیم کے سیمی فائنل میں امریکہ کی سیرینا ولیمز سے شکست کھا گئی تھیں، تاہم ماہرین کا خیال ہے کہ کویتووا کے کھیل میں مسلسل بہتری سے یہ بات واضح ہے کہ اب وہ گرینڈ سلیم ٹائٹلز میں ایک ’مسلسل خطرہ‘ تصور کی جانے لگی ہیں۔

DW.COM

ویب لنکس