1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

نوبل انعام برائے ادب جرمن ادیبہ کو ملا

جرمن نژاد ادیب ہیرتھا ملر اس سال کا نوبل انعام برائے ادب جیتنے کی حقداد قرارپائی ہیں۔ ہیرتھا ملر کے کام کا انگریزی زبان میں ترجمہ بھی کیا جاچکا ہے۔

default

ہیرتھا میولر : فائل فوٹو

آج سویڈن کے دارالحکومت اسٹاک ہولم میں اس فیصلے کا اعلان کرتے ہوئے نوبل جیوری نے اپنے تبصرے میں کہا کہ شاعری پر خصوصی توجہ اور بے ساختہ نثر ہیرتا مولر کے فن کی انفرادیت ہیں اور اِس سے اُن کے ادب کو جلا ملی ہے۔

ملرکا تعلق بنیادی طور پر رومانیہ کی جرمن اقلیتی آبادی والے قصبے نٹسکی ڈورف سے ہے۔ انعام یافتہ مصنفہ سترہ اگست 1953ء کو رومانیہ کے اُس قصبے میں پیدا ہوئیں، جہاں جرمن زبان بولی جاتی ہے۔

Buchcover: Müller - Der König verneigt sich und tötet

بیرتھا ملر نے ادب کی دنیا میں 1982ء میں اس وقت قدم رکھا، جب اس نے مختصر کہانیاں لکھنا شروع کیں۔ ابتدا میں ملر کی تحریروں کو اسمگل کر کے جرمنی میں بیچا جاتا تھا۔ باقاعدہ طور پر اس مصنفہ کے فن کی پذیرائی 1997ء میں منظر عام پر آنے والے اُس کے ناول دی اپاؤنٹمنٹ سے شروع ہوئی۔ حال ہی میں منظر عام پر آنے والی نئی کتاب آٹیم شاؤکل یعنی ’’سانس کا جھولا‘‘میں بیرتھا نے رومانیہ کے جلاوطن جرمن نژاد شہریوں کی کہانیاں پیش کی ہیں۔

ملر بذات خود دیوار برلن کے انہدام سے دو سال قبل اپنے شوہر کے ہمراہ برلن آئیں اور تب سے وہیں مقیم ہیں۔ اس انعام کے اعلان سے قبل ایک انٹرویو میں بیرتھا ملر نے کہا تھا کہ انہوں نے رومانیہ میں رہتے ہوئےکن مشکلات کے ساتھ جرمن زبان سیکھی اور پھر اس میں شعر اور نثر لکھنا شروع کی۔ ناقدین کے بقول انعام جینتے والی بیرتھا ملر کی تحریروں میں مختصر جملے اور انتہائی سادہ زبان اسے اپنے ہم عصروں سے ممتاز کرتا ہے۔

Herta Müller

نوبل انعام یافتہ ادیبہ ہیرتھا ملر

بیرتھا کو نوبل اعزاز کے ساتھ ساتھ چودہ لاکھ امریکی ڈالر کے مساوی ایک کروڑ سویڈش کرونر کی رقم بھی ملے گی۔

نوبل انعامات کا سلسلہ سو سال سے بھی زیادہ عرصے سے جاری ہے۔ یہ اعزاز سویڈن سے تعلق رکھنے والے انیسیوی صدی کے متنازعہ سائنس دان اور بارود کے موجد الفریڈ نوبل کی آخری خواہش کے طور پر ادب، امن اور سائنس کے مختلف شعبوں میں غیر معمولی کارنامے انجام دینے والے افراد کو دیا جاتا ہے۔اس سال طب، کیمیا، طبیعات اور ادب کے شعبوں کے فاتحین کا اعلان ہو چکا ہے۔ کل امن جبکہ پیر کے روز معاشیات کے شعبوں میں کامیاب ہونے والوں کے ناموں کا علان کیا جائے گا۔ ان سبھی انعامات کی تقریبِ تقسیم دَس دسمبر کو ہو گی۔

رپورٹ: شادی خان سیف

ادارت: انعام حسن