1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

نئی دہلی میں 19ویں کامن ویلتھ گیمز کا شاندار افتتاح

نئی دہلی میں برطانوی دولت مشترکہ میں شامل 71 ملکوں اور علاقوں کے ہزاروں کھلاڑیوں کے مابین کامن ویلتھ گیمز کہلانے والے بین الاقوامی مقابلے آج کئی گھنٹے تک جاری رہنے والی ایک رنگا رنگ افتتاحی تقریب کے ساتھ شروع ہو گئے۔

default

افتتاحی تقریب میں برطانیہ کی نمائندگی ولی عہد شہزادہ چارلس نے کی

انتہائی سخت حفاظتی انتطامات کے تحت منعقد کرائے جانے والے یہ بارہ روزہ مقابلے 14 اکتوبر کو ختم ہوں گے۔ نئی دہلی کے جواہر لال نہرو اسٹیڈیم میں ہونے والی افتتاحی تقریب میں برطانیہ کی نمائندگی ولی عہد شہزادہ چارلس نے کی۔ کامن ویلتھ گیمز کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے کہ ان کھیلوں کا افتتاح برطانوی ملکہ الزابیتھ دوئم نے خود نہیں کیا۔

کھیلوں کے ان بین الاقوامی مقابلوں کے انعقاد کے لئے بھارتی دارالحکومت میں کئی مہینوں سے زبردست تیاریاں جاری تھیں۔ لیکن اس دوران مختلف تعمیراتی منصوبوں کی تکمیل میں تاخیر اور کئی اسکینڈلز کی وجہ سے ان کھیلوں کے منتظم ادارے اور بھارت کو مجموعی طور پر شدید تنقید کا سامنا بھی کرنا پڑا تھا۔

Commonwealth Games in Neu Delhi Flash-Galerie

سکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کیے گئے

مقامی وقت کے مطابق اتوار کی شام ان کھیلوں کی کم ازکم تین گھنٹے تک جاری رہنے والی افتتاحی تقریب کے دوران امن عامہ میں کسی بھی قسم کی ممکنہ خرابی کو روکنے کے لئے انتہائی سخت سکیورٹی انتظامات کئے گئے تھے۔ اسٹیڈیم اور اس کے نواحی علاقوں کے علاوہ پورے شہر میں ہزار ہا سکیورٹی اہلکار ڈیوٹی پر موجود تھے۔

ان کھیلوں کے افتتاح اور مقابلوں کے انعقاد کے دوران بھارتی سکیورٹی اداروں کو دہشت گردوں کی طرف سے ممکنہ حملوں کا خدشہ بھی رہا، جس کے قبل از وقت تدارک کے لئے اتوار کو شہر میں احتیاطی طور پر تمام مارکیٹیں اور بازار دن بھر بند رکھنے کا حکم بھی دے دیا گیا تھا۔

Indien Commonwealth Games New Delhi Flash-Galerie

رنگا رنگ افتتاحی تقریب تین گھنٹے تک جاری رہی

ان مقابلوں میں آئندہ گیارہ روز تک چار ہزار سے زائد ایتھلیٹس حصہ لیں گے۔ ان گیمز کے دوران کھیلوں کے 17 مختلف شعبوں میں 272 ایونٹس میں مرد اور خواتین کھلاڑیوں کے مابین مقابلہ ہو گا۔ ان کھیلوں میں ایتھلیٹکس، بیڈمنٹن، باکسنگ، سائیکلنگ، جمناسٹک، ٹینس، ویٹ لفٹنگ اور ریسلنگ بھی شامل ہیں۔

رپورٹ: عصمت جبیں

ادارت: مقبول ملک

DW.COM

ویب لنکس