1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

’مڈ نائٹس چلڈرن‘ پر فلم کی عکس بندی مکمل

متنازعہ ادیب سلمان رشدی کے مقبول ناول ’مڈ نائٹس چلڈرن‘ پر مبنی فلم کی شوٹنگ مکمل ہو گئی ہے۔ اس فلم کی عکس بندی خفیہ طور پر سری لنکا میں کی گئی۔

default

سلمان رشدی: فائل فوٹو

فلم کی ہدایتکار دیپا مہتا نے بتایا ہے کہ انہوں نے اس فلم کی شوٹنگ پاکستان یا بھارت کے بجائے سری لنکا میں اس لیے کی تاکہ مذہبی تنظیموں کے احتجاج کو نظر انداز کیا جا سکے۔ کینیڈا کے ایک اخبار دی گلوب اور میل کو انٹرویو دیتے ہوئے دیپا مہتا نے کہا ،’ مسلمان، سلمان رشدی کے خلاف ہیں جبکہ ہندو میرے‘۔ انہوں نے تصدیق کی کہ اتوار کو اس فلم کی شوٹنگ مکمل کر لی گئی۔

سلمان رشدی کے متنازعہ ناول The Satanic Verses کے شائع ہونے کے بعد ایران کے ایک اعلیٰ مذہبی رہنما نے انہیں قتل کرنے کا فتویٰ جاری کیا تھا، جس کے بعد سلمان رشدی کئی برسوں تک لندن میں پولیس کی سکیورٹی میں رہے تھے۔ دوسری طرف دیپا مہتا اپنے لبرل خیالات کی وجہ سے ہندو انتہا پسندوں کے عتاب کا شکار ہیں۔

Midnight's Children

مڈ نائٹس چلڈرن ناول پر اسٹیج ڈرامے کا ایک منظر

اگرچہ اس فلم کے تمام عملے سے ایک معاہدے پر دستخط کروائے گئے تھے کہ وہ اس پراجیکٹ کو خفیہ رکھیں گے تاہم شوٹنگ کے درمیان ہی یہ بات عام ہو گئی کہ دیپا مہتا سری لنکا میں سلمان رشدی کے ناول Midnight's Children پر فلم بنا رہی ہیں۔

اس بات کے عام ہونے کے بعد ایرانی حکومت نے کولمبو حکومت سے احتجاج کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ اس فلم کی عکس بندی پر پابندی عائد کر دے تاہم سری لنکا کے صدر مہیندر راجہ پاکسے نے ایسی کسی بھی پابندی سے انکار کر دیا تھا۔

دیپا مہتا کی اس فلم میں رابطہ کاری کرنے والے سری لنکن پروڈکشن ہاؤس ’دی فلم ٹیم‘ نے بھی تصدیق کی ہے کہ ایرانی حکومت کے اعتراض کے باوجود اس فلم کی عکس بندی مکمل کر لی گئی ہے۔

چھ سو صفحات پر مبنی مڈ نائٹس چلڈرن نامی ناول کو 1981ء میں بکر پرائز دیا گیا تھا۔ اس ناول میں بھارت کی آزادی سے پہلے اور بعد کی صورتحال کو موضوع بنایا گیا ہے۔ اس ناول کی کہانی کا مرکزی کردار سلیم سنائی ہے، جو پندرہ اگست 1947ء کی رات عین اسی وقت پیدا ہوتا ہے، جب بھارت آزاد ہوتا ہے۔

اس ناول پر بنائی جانے والی فلم ’وِنڈز آف چینج‘ کے نام سے 2012ء کی پہلی سہ ماہی میں نمائش کے لیے تیار ہو جائے گی۔ اس فلم کا اسکرپٹ سلمان رشدی نے لکھا ہے جبکہ مرکزی اداکاروں کے چناؤ میں بھی انہوں نے دیپا مہتا کا ساتھ دیا۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: عابد حسین

DW.COM

ویب لنکس