1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

ملنگا کی واپسی، کینیا کے لیے پریشانی کا پیش خیمہ

سری لنکا کے کوچ نے امید ظاہر کی ہے کہ آج منگل کو عالمی کپ کے کینیا کے خلاف کھیلے جانے والے میچ میں سری لنکا کی ٹیم میں فاسٹ بولر لاسِتھ ملنگا بھی شامل ہوں گے۔

default

سری لنکا کی ٹیم کو اپنے گزشتہ میچ میں پاکستان کے ہاتھوں گیارہ رنز سے شکست ہوئی تھی۔ بعد ازاں ماہرین نے خیال ظاہر کیا تھا کہ سری لنکن ٹیم کی بولنگ میں کوئی خاص کمال نہیں تھا، جس کی وجہ سے پاکستانی بلے بازوں نے ایک بڑا سکور بنا لیا تھا۔ اب امید کی جا رہی ہے کہ ملنگا کی واپسی سے کینیا کی مشکلات میں اضافہ ہو جائے گا۔

سری لنکا کے کوچ Trevor Bayliss نے کہا ہے کہ ملنگا جو گزشتہ دو ہفتوں سے کمر کی تکلیف میں مبتلا تھے، آج کے میچ میں دستیاب ہوں گے: ’’ملنگا کے فیزیو تھیراپسٹ نے کہا تھا کہ ملنگا کے لیے دو ہفتے انتہائی اہم ہوں گے۔ اب یہ دو ہفتے پورے ہو گئے ہیں۔‘‘ انہوں نے مزید کہا کہ ملنگا اب فٹ ہیں اور اس بات کا انحصار سلیکشن کمیٹی پر ہے کہ وہ انہیں منتخب کرتی ہے یا نہیں۔

Flash-Galerie Cricket WM 2011

ملنگا واحد ایسے بولر ہیں جنہوں نے عالمی کپ مقابلوں میں مسلسل چار گیندوں پر چار وکٹیں حاصل کی ہوئی ہیں

ایسی اطلاعات بھی ہیں کہ سری لنکا کی سلیکشن کمیٹی کینیا کے خلاف ملکی ٹیم کے اس میچ میں آف سپنر مرلی دھرن کو شاید آرام دینے کی غرض سے فائنل ٹیم میں شامل نہ کرے۔ دوسری طرف اپنے پہلے دونوں میچوں میں ناکامی کے بعد کینیا کی کوشش ہو گی کہ آج کے میچ میں وہ کوئی اچھی کارکردگی دکھائے۔

اس وقت گروپ اے میں پہلے نمبر پر پاکستان کی ٹیم ہے، جس نے اپنے دونوں میچوں میں کامیابی کے ساتھ چار پوائنٹس حاصل کر رکھے ہیں۔ اگرچہ آسٹریلیا نے بھی اپنے دونوں میچوں میں کامیابی حاصل کی ہے اور اس کے بھی چار پوائنٹس ہیں تاہم اس کی اوسط پاکستان سے بہتر نہیں ہے۔ اس گروپ میں تیسرے نمبر پر سری لنکا جبکہ چوتھے نمبر پر نیوزی لینڈ کی ٹیم ہے۔

گروپ بی میں اس وقت بھارت تین پوائنٹس کے ساتھ پہلے جبکہ اتنے ہی پوائنٹس کے ساتھ انگلینڈ کی ٹیم دوسرے نمبر پر ہے۔ کل پیر کے روز ویسٹ انڈیز نے اپنے دوسرے میچ میں ہالینڈ کو شکست دے کر گروپ بی میں تیسری پوزیشن سنبھال لی تھی۔ جنوبی افریقہ نے اب تک ایک ہی میچ کھیلا ہے اور وہ ابھی تک اس گروپ میں چوتھے نمبر پر ہے، پانچویں نمبر پر بنگلہ دیش کی ٹیم ہے۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: مقبول ملک

DW.COM