1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

مصباح الحق کو آئی سی سی ٹیسٹ چیمپئن شپ ’میس‘ حاصل

پاکستانی ٹیسٹ کرکٹ ٹيم کے کپتان مصباح الحق توقع کرتے ہیں کہ ملک میں جلد ہی بین الاقوامی کرکٹ دوبارہ شروع ہو سکے گی۔ پاکستانی ٹیم کی ٹیسٹ رینکنگ میں اول پوزیشن حاصل کرنے کے اعزاز میں انہیں ’ٹیسٹ میس‘ سے نوازا گیا ہے۔

Misbah-ul-Haq Cricket Spieler ICC Test Championship mace

نمبر ون ٹیم بننے والا دن میری زندگی کے بہترین دنوں میں سے ایک ہے، مصباح الحق

42 سالہ مصباح الحق کے لیے یہ ایک یادگار موقع تھا جب انہیں لاہور کے قذافی اسٹیڈیم میں ’ٹیسٹ میس‘ دیا گیا۔ اس ٹرافی کو حاصل کرنے کے بعد مصباح الحق نے کہا،’’ آئی سی سی ٹیسٹ چیمپئن شپ ’میس‘ کو حاصل کرنے کے لیے اس میدان سے اچھی جگہ کوئی اور نہیں ہوسکتی تھی۔ یہ بات ہمارے مداحوں اور کھلاڑیوں کے لیے تکلیف دہ ہے کہ پاکستان کو نمبر ون ٹیم بننے کا اعزاز پاکستان سے باہر حاصل ہوا۔‘‘

مصباح الحق نے مزيد کہا،’’ نمبر ون ٹیم بننے والا دن میری زندگی کے بہترین دنوں میں سے ایک ہے۔ میں سب کو مبارک باد دینا چاہتا ہوں۔ ہر کھلاڑی، کوچ، سیلیکٹر اور ہر اس شخص کو جس نے ٹیم کو نمبر ون پوزیشن پر پہنچایا ہے۔‘‘

مصباح الحق نے کہا کہ کھلاڑیوں نے کرکٹ کے میدانوں میں پاکستانی شائقین کے بغیر کرکٹ کھیلی اور کرکٹ کے مداح ٹیم اور کھلاڑیوں کی بہترین اور زبردست پرفارمنس براہ راست دیکھنے سے محروم رہے۔ ان کے بقول انہیں امید ہے کہ یہ صورتحال عنقريب تبدیل ہو جائے گی اور مستقبل میں پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کھیلی جائے گی۔

London Cricket England vs Pakistan

امید ہے کہ مستقبل میں پاکستان میں بین الاقوامی کرکٹ کھیلی جائے گی، مصباح الحق

پاکستان میں سن 2009 میں سری لنکا کی کرکٹ ٹیم پر دہشت گردانہ حملے کے بعد سے پاکستان ميں کوئی بھی بین الاقوامی ٹورنامنٹ منعقد نہیں ہو سکا ہے۔

کپتان مصباح الحق کی ٹیم نے متحدہ عرب امارات میں آسٹریلیا اور انگلینڈ کی ٹیموں کو شکست دی، نیوزی لینڈ کے ساتھ سيريز بے نتیجہ رہی اور سری لنکا اور بنگلہ دیش کی ٹیموں کو متاثر کن شکست سے دوچار کیا۔ حال ہی میں ٹیسٹ کرکٹ میں پاکستانی ٹیم بھارت کی جگہ دنیا کی نمبر ایک ٹیم بن گئی ہے۔ پاکستان نے یہ اعزاز بھارت اور ویسٹ انڈیز کے درمیان پورٹ آف اسپین ٹیسٹ بارش کی نذر ہونے کے بعد حاصل کیا۔

مصباح الحق کا کہنا ہے کہ وہ اس کامیابی کو برقرار رکھنے کی کوشش کریں گے اور بھرپور پرفارمنس سے اپنی حریف ٹیموں کو کرکٹ کے میدان میں شکست دیں گے۔

مصباح الحق کو یہ ٹرافی ملنے کے بعد پاکستانی سوشل میڈیا پر ہیش ٹیگ مصباح ٹرینڈ کر رہا ہے اور ان کے مداح مصباح الحق کو مبارک باد پیش کر رہے ہیں۔

DW.COM