1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

مراکش: غرباء میں خوراک کی تقسیم، بھگدڑ میں پندرہ شہری ہلاک

شمالی افریقی ملک مراکش میں غریبوں میں خوراک کی تقسیم کے موقع پر بھگدڑ مچ جانے کے نتیجے میں پندرہ شہری ہلاک ہو گئے۔ یہ سانحہ اتوار انیس نومبر کو پیش آیا اور اس واقعے میں پانچ شہری زخمی بھی ہو گئے۔

رباط سے اتوار انیس نومبر کو موصولہ نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹوں کے مطابق ملکی وزارت داخلہ نے بتایا کہ یہ سانحہ جنوبی مراکش کے ایک گاؤں میں اس وقت پیش آیا، جب وہاں ایک فلاحی ادارے کی طرف سے ضرورت مندوں میں مفت خوراک تقسیم کی جا رہی تھی۔

ممبئی کے ایک پُل پر بھگدڑ پھیلنے سے 22 ہلاک، 32 زخمی

مذہبی اجتماع میں بھگدڑ، 24 ہلاک

’’سعودی عرب میں منٰی واقعے کا اب تذکرہ بھی نہیں ہوتا‘‘

وزارت داخلہ کے ایک بیان کے مطابق یہ بھگدڑ ایک ایسی مقامی ہفتے وار مارکیٹ کے وقت مچی، جہاں مراکش کے صوبے الصویرہ کے ایک گاؤں میں سینکڑوں ضرورت مند شہریوں میں مفت اشیائے خوراک تقسیم کی جا رہی تھیں۔

ایسوسی ایٹڈ پریس نے لکھا ہے کہ مراکش کے شاہ محمد ششم نے ان ہلاکتوں پر دلی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ہلاک شدگان اور زخمیوں کے خاندانوں کی مدد کرے گی۔ اس کے علاوہ ہلاک شدگان کی تدفین اور زخمیوں کے علاج معالجے پر اٹھنے والے اخراجات بھی حکومت ادا کرے گی۔

مراکش کی ایک مقامی نیوز ویب سائٹ ’الیوم 24 ڈاٹ کوم‘ کے مطابق یہ 15 افراد انفرادی طور پر تقسیم کی جانے والے اس خوراک کے حصول کی جدوجہد کے دوران ہلاک ہوئے، جس کی ایک پیکٹ کے طور پر فی کس مالیت صرف قریب 16 امریکی ڈالر کے برابر بنتی تھی۔

جنوبی مراکش میں الصویرہ کے صوبے میں یہ سانحہ سیدی بولعلام نامی گاؤں میں پیش آیا، جو اس صوبے کے اسی نام کے دارالحکومت سے قریب 60 کلومیٹر کے فاصلے پر واقع ہے۔ مراکش شمالی افریقہ کی ایک ایسی ریاست ہے، جہاں ملک کے دور دراز علاقوں میں رہنے والے شہریوں کی بہت بڑی تعداد کافی زیادہ غربت کا شکار ہے۔

ایسے علاقوں میں اکثر مختلف فلاحی تنظیموں کی طرف سے عام شہریوں میں اشیائے خوراک تقسیم کی جاتی ہیں۔ یہ امدادی اشیاء بالعموم ہفتے میں ایک بار کسی بھی گاؤں یا قصبے کی مقامی مارکیٹ میں تقسیم کی جاتی ہیں، جہاں اس دوران اس لیے بہت زیادہ ہجوم ہو جاتا ہے کہ اس امداد کے حصول کے لیے ہزاروں کی تعداد میں لوگ دور دراز کے علاقوں سے بھی وہاں آتے ہیں۔

مراکش میں زرعی شعبے کو گزشتہ کچھ عرصے سے شدید خشک سالی کا بھی سامنا ہے اور وہاں بنیادی اشیائے خوراک کی قیمتیں بھی بہت زیادہ ہیں، جو بہت سے عام شہری ادا نہیں کر سکتے۔

ویڈیو دیکھیے 02:28

غربت مٹانے کی کوشش میں ڈاووس کا سفر

DW.COM

Audios and videos on the topic