1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

’مخصوص حالات میں‘ کنڈوم کا استعمال جائز، پاپائے روم

ایڈز کے خلاف سرگرم کارکنان نے کنڈوم کے استعمال پر پاپائے روم کے بیان کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس مہلک بیماری سے انسانی زندگیوں کو بچانے کے لئے ایک تاریخی پیش رفت ثابت ہو گی۔

default

کیتھولک مسیحیوں کے روحانی پیشوا پوپ بینیڈکٹ شانزدہم

کیتھولک مسیحیوں کے روحانی پیشوا پوپ بینیڈکٹ شانزدہم نے کہا ہے کہ کنڈوم کا استعمال ہمیشہ ہی غلط نہیں ہوتا۔ تاہم انہوں نے کہا کہ اس بات کا فیصلہ حالات اورعوامل پر ہو گا کہ آخر کوئی کنڈوم استعمال کیوں کر رہا ہے۔ پاپائے روم نے اس تازہ مؤقف کو بیان کرتے ہوئے یہ بھی کہا،’ لیکن ایڈز جیسی خوفناک بیماری سے نمٹنے کے لئے یہ کوئی مناسب طریقہ نہیں ہے۔‘ انہوں نے کہا کہ کنڈوم ایڈز کی روک تھام کے لئے ’اخلاقی حل‘ ہرگز نہیں ہے۔

ایک اعشاریہ ایک بلین کتھولک مسیحیوں کے روحانی پیشوا نے مزید کہا کہ کنڈوم کا استعمال ایڈز جیسی مہلک بیماری سے بچنے کے لئے جائز ہوسکتا ہے،’ کچھ مخصوص حالات میں، جب انفیکشن کے امکانات کو کم کرنے کے ارادے سے اسے استعمال کیا جائے۔‘

ویٹی کن سٹی مصنوعی مانع حمل کے خلاف ہےاور ایک لمبے

World AIDS Day

ایڈز بیماری کے خلاف آگاہی کے لئے ایک پوسٹر

عرصے تک اس نے کنڈوم کی مخالفت اسی لئے کی کہ یہ مانع حمل کے طریقے کے طور پر بھی استعمال کیا جاتا ہے۔ مارچ سن 2009ء میں پاپائے روم کے ایک بیان نے اس وقت ایک بحث کا آغاز کر دیا تھا، جب انہوں نے اپنے دورہ افریقہ کے دوران کہا تھا کہ عام لوگوں کو کنڈوم فراہم کرنے کی مہم سے ایڈز کی بیماری مزید پھیل سکتی ہے۔ انہوں نے یہ بیان افریقی ملک کیمرون میں دیا تھا، جہاں ایڈز کے انفیکشن سے بچنے کے ممکنہ طریقوں کی تشہیر کرتے ہوئے کنڈوم بانٹے جا رہے تھے۔

عالمی مبصرین اور مذہبی رہنما، پاپائے روم کے مؤقف میں تبدیلی کو نہایت اہم قرار دے رہے ہیں۔ ان کے مطابق پاپائے روم کا یہ بیان ایک اہم پیش رفت ثابت ہوگا۔ ایڈزاور ایچ آئی وی پر اقوام متحدہ کے خصوصی پروگرام UNAIDS نے بھی پوپ کے اس بیان کو بڑی اہمیت دی ہے۔ اس پروگرام کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر Michel Sidibe کے مطابق،’ اس قدم سے احساس ہوتا ہے کہ جنسی ملاپ میں ذمہ دارانہ رویہ انتہائی اہم ہے اور کنڈوم کے استعمال سے ایچ آئی وی کی روک تھام میں مدد مل سکتی ہے۔‘

پاپائے روم کے یہ بیانات آئندہ ہفتے ایک کتاب میں شائع کئے جائیں گے۔ خیال رہے کہ جنسی ملاپ کے وقت کنڈوم کا استعمال ایڈز جیسی مہلک بیماریوں کی منتقلی کے امکانات کم تو کر سکتا ہے تاہم یہ طریقہ سو فیصدی محفوظ ہرگز نہیں ہے۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: عابد حسین

DW.COM

ویب لنکس