1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

محمود عباس کا جنرل اسمبلی سے خطاب

فلسطینی انتظامیہ کے صدر محمود عباس نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کے دوران کہا ہے کہ وہ اسرائیل کے ساتھ براہ راست مذاکرات کی حتمی کامیابی تک ہر ممکنہ حد تک آگے بڑھنے کو تیار ہیں۔

default

محمود عباس نے اپنے خطاب میں کہا کہ وہ براہ راست مذاکرات کو متاثر کرنے والی تمام رکاوٹوں کا خاتمہ چاہتے ہیں اور ان میں سے سب سے اہم مقبوضہ مغربی اردن کے علاقے میں نئی یہودی بستیوں کی تعمیر ہے۔

Scharm el Scheich Ägypten zweite Runde der Nahost-Friedensverhandlungen

کلنٹن نے محمود عباس سے ملاقات کی

صدر عباس نے اپنے خطاب میں کہا کہ فلسطینی عوام ایک برس کے اندر اندر اسرائیل کےساتھ امن معاہدے کی ہر ممکن حد تک مخلصانہ کوشش کریں گے۔ انہوں نے اگرچہ یہودی بستیوں کی تعمیر پر آج اتوار کے روز ختم ہو رہی اسرائیلی پابندی کے حوالے سے اپنے خطاب میں کوئی بات نہیں کہی تاہم فلسطینی صدر نے اتنا ضرور کہا کہ اسرائیل ’’امن یا آبادی کاری‘‘ میں سے کوئی ایک چیز چن لے۔

انہوں نے اپنے خطاب میں بار بار اشارتاﹰ کہا کہ اسرائیلی وزیراعظم بینجمن نیتن یاہو نے یہودی بستیوں کی تعمیر پر عائد کردہ عارضی پابندی میں توسیع نہ کی تو براہ راست مذاکرات ختم کر دئے جائیں گے۔ امریکی سرپرستی میں جاری ان براہ راست امن مذاکرات سے امید کی جا رہی ہے کہ فریقین ایک برس میں کسی ممکنہ اور قابل قبول حل تک پہنچ جائیں گے۔

Netanjahu / Abbas / Jerusalem

ایک لمبے عرصے کے بعد فریقین کے درمیان دوبارہ براہ راست مذاکرات شروع ہوئے ہیں

قدامت پسند اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو اور اسرائیلی حکمران اتحاد میں شامل یہودی آباد کاری کی حامی جماعتیں اب تک امریکی انتظامیہ کی ان درخواستوں کو رد کرتے آئے ہیں، جن میں کہا جا رہا تھا کہ مقبوضہ علاقوں میں نئی یہودی بستیوں کی تعمیر کو روک دیا جائے۔

جمعے کے روز امریکی وزیرخارجہ ہلیری کلنٹن نے فلسطینی انتظامیہ کے سربراہ محمود عباس سے ملاقات بھی کی تھی۔ نیویارک میں ہونے والی اس ملاقات میں کلنٹن نے عباس پر زور دیا کہ وہ براہ راست مذاکرات کا راستہ کسی صورت ترک نہ کریں۔ اس ملاقات کے بعد تاہم یہ نہیں بتایا گیا کہ آیا مشرق وسطیٰ واپسی سے قبل عباس اور کلنٹن کے درمیان دوبارہ بات چیت ہو گی یا نہیں۔

امریکی وزارت خارجہ کے ترجمان پی جے کراؤلی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ مشرق وسطیٰ کے لئے خصوصی امریکی مندوب جارج مچل نے بھی ہفتے کو نیویارک میں محمود عباس سے نصف گھنٹے کی ملاقات کی۔

رپورٹ: عاطف توقیر

ادارت: مقبول ملک

DW.COM

ویب لنکس