1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ماؤ نوازوں کی جانب سے بھارت کے انتخابات میں خلل ڈالنے کی کوشش

بھارت میں پارلیمانی انتخابات کے دوسرے مرحلے سے محض ایک روز قبل ماؤ نواز باغیوں نے ریاست جھارکھنڈ میں ایک مسافر ٹرین کو کچھ دیراپنے قبضے میں رکھنے کے بعد اسے چھوڑ دیا ہے۔

default

نکسل باغیوں نے پہلے ہی انتخابات میں خلسل ڈالنے کی دھمکی دے رکھی ہے

مشرقی ریاست جھارکھنڈ کے حکام کے مطابق باغیوں نےلاتاہیرنامی علاقے میں ٹرین پرقبضہ کیا تاہم پولیس کی بھاری نفری کے پہنچنے کے بعد باغیوں نے مسافرٹرین کو آزاد کر دیا۔

حکام نے مزید بتایا کہ اس کارروائی میں دو سو سے ڈھائی سو ماؤ نواز باغی شریک تھے۔ ریاست جھارکھنڈ میں علیحدگی پسندوں نے پہلے ہی انتخابات میں خلل ڈالنے کی دھمکی دی ہوئی ہے۔

لوک سبھا انتخابات کے پہلے مرحلے میں باغیوں نے کئی پولنگ اسٹیشنوں پر حملے بھی کئے تھے۔ اس مرحلے کے دوران مختلف پرتشَدد کارروائیوں کے نتیجے میں متعدد سیکیورٹی اہلکاروں سمیت کم از کم بیس افراد ہلاک ہوئے۔

ماؤ نواز باغی بھارت کی چار ریاستوں میں سرگرم عمل ہیں جن میں ریاست جھارکھنڈ کے علاوہ اڑیسہ اور چھتیس گڑھ بھی شامل ہیں۔

DW.COM

Audios and videos on the topic