1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

لندن: زیر زمین اسٹیشن پر بم حملے کا 18 سالہ مشتبہ ملزم گرفتار

برطانوی پولیس نے لندن کے ایک زیر زمین ریلوے اسٹیشن پر جمعہ پندرہ ستمبر کو کیے گئے بم حملے کے ایک اٹھارہ سالہ مشتبہ ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔ اس حملے میں انتیس افراد زخمی ہوئے تھے۔ ملزم کو شہر ڈوور سے حراست میں لیا گیا۔

برطانوی دارالحکومت لندن سے ہفتہ سولہ ستمبر کو ملنے والی مختلف نیوز ایجنسیوں کی رپورٹوں کے مطابق سکاٹ لینڈ یارڈ نے بتایا کہ لندن انڈرگراؤنڈ پر ایک روز قبل کیے گئے بم حملے کے سلسلے میں جس نوجوان کو گرفتار کیا گیا ہے، اس نے مشتبہ طور پر اس حملے میں اہم کردار ادا کیا۔

سکاٹ لینڈ یارڈ نے بتایا کہ ملزم کی عمر صرف 18 برس ہے اور اسے انگلینڈ کے جنوبی بندرگاہی شہر ڈوور سے گرفتار کیا گیا۔ پولیس کے تفتیشی ماہرین اس مشتبہ ملزم یا ان ملزمان کی تلاش میں تھے، جنہوں نے لندن کے زیر زمین ریلوے نظام کے پارسنز گرین نامی اسٹیشن پر وہ بالٹی بم رکھا تھا، جو اس دھماکے میں استعمال ہوا تھا۔

لندن ميں دہشت گردی، ميٹرو اسٹيشن پر بم دھماکے ميں انتیس زخمی

میڈرڈ سے مانچسٹر تا بارسلونا: دہشت گردانہ واقعات کا سلسلہ

لندن میں مسجد کے قریب حملہ: ایک شخص ہلاک، دس زخمی

انسداد دہشت گردی کے برطانوی ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ بم دراصل ایک ایسی بالٹی تھی جسے لوہے کی کیلوں اور ٹی اے ٹی پی نامی دھماکا خیز مواد سے بھر کر پارسنز گرین کے ٹیوب اسٹیشن پر رکھ دیا گیا تھا۔ جمعے کے دن، اس وقت جب لندن انڈرگراؤنڈ میں مسافروں کا بہت زیادہ رش ہوتا ہے، خوش قسمتی سے یہ بم صرف جزوی طور ہی پھٹ سکا تھا۔ پھر بھی اس دھماکے کی وجہ سے 29 افراد زخمی ہو گئے تھے۔

London nach Anschlag auf U-Bahn Station Parsons Green (picture-alliance/dpa/AP/T. Ireland)

لندن انڈرگراؤنڈ کا پارسنز گرین ریلوے اسٹیشن

Großbritannien London - Eston Station nach Terroranschlag

یہ بم حملہ اس وقت کیا گیا جب لندن ٹیوب سسٹم میں مسافروں کا بہت زیادہ رش ہوتا ہے

سکاٹ لینڈ یارڈ کے مطابق یہ بات ابھی واضح نہیں کہ ’دہشت گردانہ حملہ‘ قرار دی گئی اس کارروائی کا ذمہ دار کوئی ایک ملزم تھا یا ایک سے زیادہ۔ حکام کو امید ہے کہ جس نوجوان کو گرفتار کیا گیا ہے، اس سے اس بارے میں بہت اہم معلومات حاصل ہو سکیں گی۔

London Anschlag auf Underground Ubahn

اس حملے کے بعد بم ڈسپوزل ماہرین نے اس پوری ٹرین کی مکمل تلاشی لی تھی، جس میں بالٹی بم رکھا گیا تھا

لندن حملہ آوروں میں سے دو کی شناخت ظاہر کر دی گئی

لندن دہشت گردانہ حملے، بارہ افراد گرفتار

مزید حملوں کا خدشہ، برطانیہ میں فوج تعینات کرنے کا فیصلہ

نیوز ایجنسی ڈی پی اے کے مطابق پولیس کے ڈپٹی اسسٹنٹ کمشنر نیل باسو نے بتایا، ’’اس ملزم کی ہفتے کو صبح کے وقت عمل میں آنے والی گرفتاری اس بم حملے کی تفتیش میں ایک اہم پیش رفت ہے۔ اسے انسداد دہشت گردی کے قانون کے تحت پوچھ گچھ کے لیے حراست میں لیا گیا ہے تاہم ابھی تک نہ تو اس پر کوئی فرد جرم عائد کی گئی ہے اور نہ ہی فی الحال اس کی شناخت ظاہر کی جائے گی۔‘‘

نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق لندن کے پارسنز گرین انڈرگراؤنڈ ٹرین اسٹیشن کو کل کے بم حملے کے ایک روز بعد آج سولہ ستمبر کی صبح مسافروں کے لیے دوبارہ کھول دیا گیا۔

اس بم حملے کے بعد وزیر اعظم ٹریزا مے نے ملک میں دہشت گردی کے خطرے کے خلاف وارننگ بڑھا کر بلند ترین سطح پر کر دینے کا اعلان بھی کر دیا تھا۔ پولیس کے مطابق 18 سالہ مشتبہ ملزم کی گرفتاری کے باوجود دہشت گردی کے خلاف یہ حکومتی تنبیہ فی الحال اپنی بلند ترین سطح پر ہی رہے گی۔

ویڈیو دیکھیے 01:08

لندن میں دہشت گردانہ حملے

DW.COM

Audios and videos on the topic