1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

قومی انتخابات منصفانہ ہوں گے: پرویز مشرف

غیر فوجی صدر کی حیثیت سے اپنے پہلے دورہِ یورپ کے دوران‘ پاکستانی صدر پرویز مشرف نے یورپی یونین کو ملک میں اٹھارہ فروری کو آزاد‘ منصفانہ‘ شفاف‘ غیر جانبدارانہ اور پرامن انتخابات منعقد کرانے کا یقین دلایا۔

صدر پرویز مشرف کی فائل تصویر

صدر پرویز مشرف کی فائل تصویر

یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے چیف‘ ہاوئیر سولانا نے پاکستانی صدر سے کہا کہ یورپی اتحاد کے پاکستان کے ساتھ تعلقات کا انحصار اس بات پر ہوگا کہ وہاں کے انتخابات کتنے منصفانہ اور غیر جانبدارانہ ہوتے ہیں۔

صدر مشرف نے یورپی یونین اور مغربی دفاعی اتحاد تنظیم‘ نیٹو کے حکام کے ساتھ اپنی ملاقاتوں کے بعد‘ نامہ نگاروں کو بتایا کہ وہ پاکستان میں منصفانہ انتخابات کرانے کا بھرپور عزم رکھتے ہیں۔انہوں نے انتخابات میں دھاندلیوں کو خارج از امکان قرار دیا۔

مشر ف نے مزید کہا کہ پاکستان کے جوہری ہتھیار افواج پاکستان کے محفوظ اور مضبوط ہاتھوں میں ہیں‘ اور ان کا شدت پسندوں کے ہاتھ لگنے کا کوئی سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔

اپنے دورے کے دوران مشرف‘ بیلجیم کے علاوہ فرانس‘ برطانیہ اور سویٹزرلینڈ کے شہر Davos‘ بھی جائیں گے۔ان کے اس دورے کا مقصد‘ اپنی پالیسیوں کے لئے بین الاقوامی حمایت حاصل کرنا ہے۔