1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

فرانس: یورو چیمپئن شپ سے قبل آسمانی و زمینی مشکلات

فٹ بال کی یورپی چیمپئن شپ دس جون سے شروع ہو گی۔ اس کے آغاز سے قبل شدید بارشوں سے پیدا ہونے والے سیلاب کے علاوہ پیرس حکومت کو ہڑتالوں اور ممکنہ دہشت گردانہ حملوں کے خطرے کا بھی سامنا ہے۔

default

فٹ بال کی یورپی چیمپئن شپ کی ٹرافی

پیرس شہر کے اندر سے گزرنے والے دریائے سین میں سے بڑا سیلابی ریلا گزر چکا ہے اور اِس کی بلند سطح میں سست روی سے کمی واقع ہو رہی ہے مگر ابھی بھی فرانس پر گھنے بادل چھائے ہوئے ہیں۔ اِس ویک اینڈ پر پیرس میں ہزاروں افراد دریائے سین میں سے گزرنے والے سیلابی ریلے کی تصاویر بھی بناتے رہے۔ سیلاب اور بارشوں سے پیرس اور دوسرے علاقوں کو شدید نقصان کا سامنا رہا۔ انشورنس کمپنیوں کے اہلکاروں نے سیلاب اور بارشوں سے ہونے والے نقصان کا اندازہ چھ سو ملین یورو تک لگایا ہے۔

Frankreich Paris Hochwasser

پیرس شہر کے اندر سے گزرنے والے دریائے سین میں سے بڑا سیلابی ریلا گزر چکا ہے

دوسری جانب دنیا بھر میں فٹ بال کی عالمی چیمپئن شپ کے بعد سب سے بڑے ٹورنامنٹ کا میزبان فرانس ہے۔ یہ ٹورنامنٹ فٹ بال کی یورپی ملکوں کی چیمپئن شپ ہے۔ اِس چیمپئن شپ کا پہلا میچ دس جون کو کھیلا جائے گا۔ اِس کے آغاز سے قبل شدید بارشوں اور فرانسیسی ٹرانسپورٹ نظام کی ہڑتال نے پیرس حکومت اور عوام کو انتہائی پریشان کر رکھا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ یورپی چیمپئن شپ کے دوران ممکنہ دہشت گردی کے خطرے کا انتباہ امریکی انٹلیجنس اداروں نے دے دیا ہے۔

مجموعی طور پر پولیس اور فائر بریگیڈز کے عملے سے لیکر فرانسیسی حکومت کے ہر شعبے کو دباؤ کا سامنا ہے۔ پیرس حکومت کو توقع ہے کہ یورو 2016 کے میچوں کو دیکھنے کے لیے پندرہ لاکھ شائقین اور سیاح فرانس پہنچیں گے۔ فرانسیسی ذرائع ابلاغ کے مطابق زمینی مسائل اور آسمانی آفتوں کے باوجود فرانس میں پارٹی ٹائم کا احساس پایا جاتا ہے۔

اِس ٹورنامنٹ کے دوران فرانسیسی حکومت نے انتہائی سخت سکیورٹی مرتب کرنے کے پروگرام کو پہلے ہی طے کر رکھا ہے۔ سات ماہ قبل فرانس کو ایسے دہشت گردانہ حملوں کا سامنا کرنا پڑا تھا، جن میں کم از کم ایک سو تیس انسانی جانیں ضائع ہوئی تھیں۔ اِس واقعے کے بعد سے سلامتی کی صورت حال پر خاص حکومتی فوکس دیکھا گیا ہے۔

Frankreich Paris Gare du Nord Streik der SNCF

فرانسیسی ریلوے کی ہڑتال سے اسٹیشن ویران ہیں

پیرس کی پولیس نے حکومت کو تجویز کیا ہے کہ دارالحکومت کے دو اسٹیڈیم میں کھیلے جانے والے میچوں کے بعد شائقین کے جشن برپا کرنے والے اجتماعات کو ممنوع قرار دیا جائے کیونکہ دہشت گردی کا خطرہ موجود ہے اور یہ فین زونز آسان ہدف ہو سکتے ہیں۔ یہ تجویر پیرس پولیس کے سربراہ نے ملکی وزیر داخلہ کو پیش کی ہے۔ میڈیا میں اِس تجویز کو متنازعہ قرار دیا گیا ہے۔

اسی دوران فرانسیسی ریلوے کی ہڑتال ختم ہوتی دکھائی نہیں دے رہی۔ اِس باعث لوگوں کو کاروں کے لیے پٹرول حاصل کرنے میں اب دشواری کا سامنا ہے۔ وزیراعظم مانویل والس نے ریل کمپنی ایس این سی ایف (SNCF) سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اپنی ہڑتال کو ختم کرتے ہوئے مذاکرات کا عمل شروع کرے۔ والس کے مطابق ہڑتال سے سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں ناقابلِ تلافی نقصان ہو چکا ہے۔

فرانس کی ہوائی کمپنی ایئر فرانس نے بھی گیارہ جون سے چار روزہ ہڑتال کا اعلان کر دیا ہے۔ ہڑتالوں کا سلسلہ حکومت کی نئی لیبر اصلاحات کے جواب میں ہے۔ حکومتی موقف ہے کہ ان اصلاحات سے شرح بیروزگاری میں کمی واقع ہو گی جبکہ لیبر یونینز اِس موقف سے متفق نہیں ہیں۔ رائے عامہ کے جائزوں کے مطابق حکومت اور صدر فرانسوا اولانڈ کو شدید عوامی غیرمقبولیت کا سامنا ہے۔

DW.COM