1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

اہم عالمی خبریں | 21.01.2017 | 16:26

میرکل ٹرمپ کے ساتھ سمجھوتے کی کوشش کریں گی

جرمن چانسلر انگیلا میرکل نے کہا ہے کہ وہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ تجارت اور عسکری اخراجات جیسے معاملات پر سمجھوتہ کرنے کی کوشش کریں گی۔ میرکل کے مطابق برلن کی کوشش ہو گی کہ ٹرمپ کے دور اقتدار کے دوران بھی امریکا اور یورپ کے تعلقات بہتر رہیں۔ آج برلن میں میرکل نے کہا کہ بہترین عمل یہی ہو گا کہ عالمی طاقتیں مشترکہ حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے عالمی مسائل کا حل تلاش کرنے کی کوشش کریں۔ یہ امر اہم ہے کہ گزشتہ روز ٹرمپ نے بطور صدر اپنی حلف برداری کے موقع پر کہا تھا کہ ان کے دور اقتدار کے دوران امریکیوں کے مفادات کو ترجیح دی جائے گی۔

دستوری قرارداد کی منظوری ، ترک صدر کا خیر مقدم

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے پارلیمان کی طرف سے اُس دستوری قرارداد کی منظوری کا خیر مقدم کیا ہے، جس کے تحت ملک میں صدارتی نظام رائج کرنے کے حوالے سے راہ ہموار ہو گئی ہے۔ اب اِس پارلیمانی بل کی توثیق ایک عوامی ریفرنڈم کے ذریعے کروائی جائے گی۔ ایردوآن نے اس یقین کا اظہار کیا ہے کہ عوام اس ریفرنڈم کو منظور کرتے ہوئے ملک کو مضبوط بنانے میں اپنا کردار ادا کریں گے۔ صدارتی نظام رائج ہونے سے ایردوآن کو حکومت چلانے کے لیے ایگزیکٹو اختیارات حاصل ہو جائیں گے اور وہ سن 2029 تک منصبِ صدارت پر براجمان رہ سکیں گے۔ دوسری جانب اپوزیشن کا کہنا ہے کہ اِس بِل کے تحت تشکیل پانے والے نظام میں تمام تر حکومتی اختیارات صدر کو منتقل ہو جائیں گے اور یوں ملک میں آمریت کی راہ ہموار ہو جائے گی۔

شامی مہاجر کیمپ میں کار بم حملہ، پانچ افراد مارے گئے

شام میں واقع ایک مہاجر کیمپ میں ایک کار بم دھماکے کے نتیجے میں کم ازکم پانچ افراد مارے گئے ہیں۔ مقامی ذرائع کے مطابق یہ حملہ اردن سے متصل شامی صحرائی علاقے الرکبان میں آج ہفتے کی صبح کیا گیا، جس میں تیس افراد زخمی بھی ہوئے۔ الرکبان کے مہاجر کیمپ میں 70 ہزار باشندے مقیم ہیں۔ اس کیمپ میں ایسے شامی باغی بھی رہتے ہیں، جو انتہا پسند گروہ داعش کے خلاف کارروائیوں میں حصہ لے رہے ہیں۔ فوری طور پر اس حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول نہیں کی ہے کہ لیکن اس حملے کے لیے داعش پر شبہ کیا جا رہا ہے۔

افغانستان میں حملہ، تین پولیس اہلکار ہلاک

افغان صوبے کاپیسا میں طالبان نے ایک سکیورٹی چیک پوائنٹ پر حملہ کرتے ہوئے تین پولیس اہلکاروں کو ہلاک کر دیا ہے۔ صوبائی پولیس کے ایک اعلیٰ اہلکار نے آج بتایا کہ جمعے کے دن باغیوں کے اس حملے کے بعد طالبان اور سکیورٹی فورسز کے مابین دو گھنٹے تک لڑائی کا سلسلہ جاری رہا۔ تاحال کسی گروہ نے اس خونریز کارروائی کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ دوسری طرف طالبان نے دعویٰ کیا ہے کہ کاپیسا میں ہی پولیس نے فائرنگ کرتے ہوئے چھ شہریوں کو ہلاک کر دیا ہے۔

ہالینڈ میں بہتر ملین ڈالر کی ڈکیتی، بارہ برس بعد سات مشتبہ افراد گرفتار

ہالینڈ کے دارالحکومت ایمسٹرڈیم میں بارہ برس قبل کی گئی ڈکیتی کی ایک واردات میں ملوث ہونے کے شبے میں سات افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ فروری سن دو ہزار پانچ میں ڈاکوؤں نے شیپول ہوائی اڈے کے انتہائی سکیورٹی والے مقام سے بہتر ملین ڈالر مالیت کے ہیرے اور جواہرات لوٹ لیے تھے۔ حکام نے آج بتایا ہے کہ پانچ مردوں اور دو خواتین کو بیس اور اکیس جنوری کو مختلف چھاپوں کے دوران ایمسٹرڈیم اور ہسپانوی ساحلی شہر ویلنیسا سے حراست میں لیا گیا ہے۔

شامی مہاجر کیمپ میں کار بم حملہ، پانچ افراد مارے گئے

شام میں واقع ایک مہاجر کیمپ میں ایک کار بم دھماکے کے نتیجے میں کم ازکم پانچ افراد مارے گئے ہیں۔ مقامی ذرائع کے مطابق یہ حملہ اردن سے متصل شامی صحرائی علاقے الرکبان میں آج ہفتے کی صبح کیا گیا، جس میں تیس افراد زخمی بھی ہوئے۔ الرکبان کے مہاجر کیمپ میں 70 ہزار باشندے مقیم ہیں۔ اس کیمپ میں ایسے شامی باغی بھی رہتے ہیں، جو انتہا پسند گروہ داعش کے خلاف کارروائیوں میں حصہ لے رہے ہیں۔ فوری طور پر اس حملے کی ذمہ داری کسی نے قبول نہیں کی ہے کہ لیکن اس حملے کے لیے داعش پر شبہ کیا جا رہا ہے۔

پوٹن نئے امریکی صدر سے ملاقات کے لیے تیار ہیں: ماسکو

روسی حکومت کے مطابق صدر ولادیمیر پوٹن نئے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ملاقات کے لیے تیار ہیں۔ روسی نیوز ایجنسی تاس کے مطابق ماسکو حکومت کے ترجمان دمیتری پیسکوف نے بتایا ہے کہ یہ ملاقات اگلے چند روز یا چند ہفتوں کے دوران ممکن نہیں بلکہ اس کے لیے مہنے درکار ہوں گے۔ پیسکوف کے مطایق کے مطابق اچھی امید رکھتے ہوئے یہ اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ یہ ملاقات اگلے کچھ مہینوں میں ہو سکتی ہے۔ پیسکوف نے کہا کہ صدر پوٹن اگلے چند دنوں میں ڈونلڈ ٹرمپ کو منصبِ صدارت سنبھالنے پر مبارک باد کا ٹیلی فون بھی کریں گے۔

گیمبیا: صدر جامع سبکدوش ہونے پر رضامند، سیاسی بحران ختم ہوتا ہوا

افریقی ملک گیمبیا کے بائیس برس تک صدر رہنے والے یحییٰ جامع نے ملکی ٹیلی وژن پر تقریر کرتے ہوئے عندیہ دیا ہے کہ وہ اقتدار سے سبکدوش ہو جائیں گے۔ وہ سن 1994 سے اقتدار میں ہیں۔ جامع نے اپنی تقریر میں یہ واضح نہیں کیا کہ وہ اقتدار چھوڑنے کے بعد ملک میں رہیں گے یا جلا وطنی اختیار کریں گے۔ ان کو مغربی افریقی ملکوں کی جانب سے شدید دباؤ کا سامنا ہے۔ وہ گزشتہ برس پہلی دسمبر کو ہونے والے صدارتی الیکشن میں غیر متوقع طور پر اپوزیشن لیڈر آدما بیرو سے شکست کھا گئے تھے۔ بیرو نے دو روز قبل سینیگال میں منصبِ صدارت کا حلف اٹھا لیا تھا۔ یحییٰ جامع کی مدتِ صدارت انیس جنوری کو ختم ہو چکی ہے۔

اٹلی میں برفانی تودے گرنے سے ہلاکتیں پانچ تک پہنچ گئیں

اٹلی کی نیشنل فائر سروس نے پینے کے ہوٹل ریگو پیانو پر گرنے والے برفانی تودوں کی زد میں آ کر پانچ افراد کے ہلاک ہونےکی تصدیق کی ہے۔ ان پانچ افراد کی لاشیں برف اور ہوٹل کے ملبے سے نکال لی گئی ہیں۔ امدادی ٹیمیں اب تک دو بچوں سمیت نو افراد کو زندہ نکالنے میں بھی کامیاب رہی ہیں۔ تین منزلہ ہوٹل پر گرنے والی برف تلے تقریباً تیس افراد دب کر رہ گئے تھے۔ پینے شہر کی انتظامیہ کے مطابق ابھی بھی 23 افراد برف اور ملبے تلے زندہ ہو سکتے ہیں۔ ہوٹل پر برفانی تودے بدھ ، اٹھارہ جنوری کی سہ پہر میں گرے تھے۔ فائرفائٹرز اور کوہستانی امدادی ورکروں کے ساتھ اطالوی فوج بھی ریسکیو آپریشن میں شامل ہو گئی ہے۔

میرکل ٹرمپ کے ساتھ سمجھوتے کی کوشش کریں گی

جرمن چانسلر انگیلا میرکل نے کہا ہے کہ وہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ساتھ تجارت اور عسکری اخراجات جیسے معاملات پر سمجھوتہ کرنے کی کوشش کریں گی۔ میرکل کے مطابق برلن کی کوشش ہو گی کہ ٹرمپ کے دور اقتدار کے دوران بھی امریکا اور یورپ کے تعلقات بہتر رہیں۔ آج برلن میں میرکل نے کہا کہ بہترین عمل یہی ہو گا کہ عالمی طاقتیں مشترکہ حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے عالمی مسائل کا حل تلاش کرنے کی کوشش کریں۔ یہ امر اہم ہے کہ گزشتہ روز ٹرمپ نے بطور صدر اپنی حلف برداری کے موقع پر کہا تھا کہ ان کے دور اقتدار کے دوران امریکیوں کے مفادات کو ترجیح دی جائے گی۔

پالمیرا کی مزید تباہی، سلامتی کونسل کی شدید مذمت

شام کے قدیمی و تاریخی شہر پالمیرا کے رومن ایمفی تھیئٹر کے ستونوں کو تباہ کرنے پر اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے شدید مذمت کی ہے۔ یہ تباہی دہشت گرد تنظیم ‘اسلامک اسٹیٹ‘ نے کی تھی۔ عالمی ادارے کی ثقافتی تنظیم یونیسکو نے اِس تباہی کو جنگی جرم قرار دیا ہے۔ شام کے آثار قدیمہ کے محکمے کے سربراہ مامون عبدالکریم نے پالمیرا کے ایک اہم حصے کی تباہی کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ اب ٹیٹرا پائلون کے سولہ میں سے بارہ ستونوں کا ملبہ ان کے درمیان واقع پلیٹ فارم پر گرا پڑا ہے اور صرف چار ستون تباہی سے بچ گئے ہیں۔ پالمیرا پر ’اسلامک اسٹیٹ‘ نے دوبارہ قبضہ گزشتہ برس دسمبر میں کیا تھا۔

بھارت میں شراب نوشی کے خلاف احتجاجی انسانی زنجیر

بھارتی ریاست بہار میں شراب نوشی کے خلاف آج ہونے والے ایک مظاہرے میں شریک افراد ایک دوسرے کا ہاتھ تھام کر انسانی زنجیر بنائیں گے۔ خیال کیا گیا ہے کہ یہ دنیا کی طویل ترین انسانی زنجیر ہو گی۔ بِہار کی ریاستی حکومت کے مطابق متوقع طور پر 20 ملین یعنی دو کروڑ افراد اس میں شریک ہوں گے۔ یہ آج ہفتہ 21 جنوری کی سہ پہر ایک دوسرے کا ہاتھ تھام کر پوری ریاست میں 3,007 کلومیٹر طویل انسانی زنجیر بنائیں گے۔ گِنیز ورلڈ ریکارڈز کے مطابق دنیا کی طویل ترین انسانی زنجیر 2004ء میں بنگلہ دیش میں بنائی گئی تھی جو 1,050 کلومیٹر طویل تھی۔ اس میں 50 لاکھ سیاسی کارکنوں نے ایک دوسرے کا ہاتھ تھاما تھا۔ گنیز ورلڈ ریکارڈز کی طرف سے آج کی زنجیر کے لیے مبصر نہیں بھیجے گئے۔

دستوری قرارداد کی منظوری ، ترک صدر کا خیر مقدم

ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے پارلیمان کی طرف سے اُس دستوری قرارداد کی منظوری کا خیر مقدم کیا ہے، جس کے تحت ملک میں صدارتی نظام رائج کرنے کے حوالے سے راہ ہموار ہو گئی ہے۔ اب اِس پارلیمانی بل کی توثیق ایک عوامی ریفرنڈم کے ذریعے کروائی جائے گی۔ ایردوآن نے اس یقین کا اظہار کیا ہے کہ عوام اس ریفرنڈم کو منظور کرتے ہوئے ملک کو مضبوط بنانے میں اپنا کردار ادا کریں گے۔ صدارتی نظام رائج ہونے سے ایردوآن کو حکومت چلانے کے لیے ایگزیکٹو اختیارات حاصل ہو جائیں گے اور وہ سن 2029 تک منصبِ صدارت پر براجمان رہ سکیں گے۔ دوسری جانب اپوزیشن کا کہنا ہے کہ اِس بِل کے تحت تشکیل پانے والے نظام میں تمام تر حکومتی اختیارات صدر کو منتقل ہو جائیں گے اور یوں ملک میں آمریت کی راہ ہموار ہو جائے گی۔

افغانستان میں حملہ، تین پولیس اہلکار ہلاک

افغان صوبے کاپیسا میں طالبان نے ایک سکیورٹی چیک پوائنٹ پر حملہ کرتے ہوئے تین پولیس اہلکاروں کو ہلاک کر دیا ہے۔ صوبائی پولیس کے ایک اعلیٰ اہلکار نے آج بتایا کہ جمعے کے دن باغیوں کے اس حملے کے بعد طالبان اور سکیورٹی فورسز کے مابین دو گھنٹے تک لڑائی کا سلسلہ جاری رہا۔ تاحال کسی گروہ نے اس خونریز کارروائی کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔ دوسری طرف طالبان نے دعویٰ کیا ہے کہ کاپیسا میں ہی پولیس نے فائرنگ کرتے ہوئے چھ شہریوں کو ہلاک کر دیا ہے۔

ہالینڈ میں بہتر ملین ڈالر کی ڈکیتی، بارہ برس بعد سات مشتبہ افراد گرفتار

ہالینڈ کے دارالحکومت ایمسٹرڈیم میں بارہ برس قبل کی گئی ڈکیتی کی ایک واردات میں ملوث ہونے کے شبے میں سات افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ فروری سن دو ہزار پانچ میں ڈاکوؤں نے شیپول ہوائی اڈے کے انتہائی سکیورٹی والے مقام سے بہتر ملین ڈالر مالیت کے ہیرے اور جواہرات لوٹ لیے تھے۔ حکام نے آج بتایا ہے کہ پانچ مردوں اور دو خواتین کو بیس اور اکیس جنوری کو مختلف چھاپوں کے دوران ایمسٹرڈیم اور ہسپانوی ساحلی شہر ویلنیسا سے حراست میں لیا گیا ہے۔

آڈیو سنیے 04:00
ویڈیو دیکھیے 00:40