1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ضرورت پڑنے پر پاکستان کے اندر کارروائی کروں گا: باراک اوباما

نومبر میں ہونے والے امریکی صدارتی انتخابات کے لیے گزشتہ روز رپبلکن پارٹی کے امیدوار جان میک کین اور ڈیموکریٹک پارٹی کے امیدوار باراک اوباما کے درمیان ایک مباحثہ ہوا جس میں پاکستان بھی ایک اہم موضوع رہا۔

default

ڈیموکریٹک پارٹی کے صدارتی امیدوار باراک اوباما

جہاں ایک طرف جان میک کین پاکستان کے ساتھ کم و بیش موجودہ امریکی صدر جارج ڈبلیو یش کی پالیسی کو ہی جاری رکھنا چاہتے ہیں وہاں باراک اوباما کا کہنا ہے کہ ضرورت پڑنے پر وہ القاعدہ یا طالبان کے خلاف پاکستانی سرحد کے اندر کارروائی سے گریز نہیں کریں گے۔ دونوں امیدواروں نے پاکستان کی عسکری اور اقتصادی امداد سے متعلق بھی بحث کی تاہم مباحثے سے یہ بات واضح نظر آ رہی تھی کہ باراک اوباما ، جان میک کین کی نسبت پاکستان کے بارے میں سخت گیر موقف رکھتے ہیں۔ نیویارک میں موجود ہمارے نمائندے انور اقبال کا کہنا ہے کہ اس کی ایک وجہ یہ بھی ہو سکتی ہے کہ اوباما سخت گیرامریکی حلقوں کو یہ تاثر دینا چاہتے ہوں کہ وہ صدر بننے کی صورت میںمسلمانوں کے بارے میں نرمی کا مظاہرہ نہیں کریں گے۔