1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

مہاجرین کا بحران

شامی مہاجرین زہریلی ٹافیوں کے مانند ہیں، ٹرمپ جونیئر

ڈونلڈ ٹرمپ جونیئر نے اپنے ایک ٹوئٹر پیغام میں شامی مہاجرین کو زہریلی ٹافیوں سے بھرے ایک برتن کے مترادف قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا کو انہیں قبول نہیں کرنا چاہیے۔ امریکا میں اس ٹوئٹ پر شدید ردعمل ظاہر کیا جا رہا ہے۔

ری پبلکن صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کے بیٹے ڈونلڈ ٹرمپ جونیئر نے اپنے ایک تازہ ٹوئٹ میں اپنے والد کی صدارتی مہم میں کردار ادا کرتے ہوئے یہ متنازعہ ٹوئٹ کیا تو سماجی رابطوں کی اس ویب سائٹ پر ایک گرما گرم بحث شروع ہو گئی۔

ٹرمپ جونیئر نے ٹافیوں سے بھرے ایک برتن کی تصویر شائع کرتے ہوئے ساتھ ہی لکھا، ’’اگر میرے پاس سکیٹلز (میٹھی ٹافیوں کا ایک برانڈ) ہو اور میں کہوں کہ ان میں سے صرف تین ٹافیاں ہی آپ کو ہلاک کرنے کے لیے کافی ہوں گی تو کیا آپ یہ لیں گے۔‘‘

ڈونلڈ ٹرمپ جونیئر کے ٹوئٹر اکاؤنٹ سے جاری ہونے والے پیغام میں مزید کہا گیا، ’’شامی مہاجرین کا یہی مسئلہ ہے۔‘‘ انہوں نے مزید کہا کہ کسی ایسے ایجنڈے کو فروغ نہیں دینا چاہیے، جس میں ’پہلے امریکا‘ کا نعرہ نہ آئے۔

اس ٹوئٹ کے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بالخصوص امریکا میں آج بروز منگل 20 ستمبر ایک گرما گرم بحث شروع ہو گئی۔ کئی مشہور شخصیات نے بھی ڈونلڈ ٹرمپ جونیئر کے اس ٹوئٹ کو کڑی تنیقد کا نشانہ بنایا ہے۔

Donald Trump Jr. mit Ehefrau Vanessa

ڈونلڈ ٹرمپ جونیئر اپنی اہلیہ وانیسیا کے ہمراہ

کالم نگار اور اوباما کے لیے تقاریر لکھنے والے جان فیوَرو نے اپنی ایک ٹوئٹ میں کہا کہ ٹرمپ جونیئر ان بچوں کو زہریلی ٹافیوں سے تشبیہ دے رہے ہیں۔

مشہور مصنف اور مذہبی اسکالر رضا اسلان نے ٹرمپ جونیئر کے اس ٹوئٹ پر تنقید کرتے ہوئے انہیں ان کے والد ڈونلڈ ٹرمپ جسی ذہینت کا مالک قرار دیا۔

اسی طرح سنگر جان لیجنڈ بھی ٹرمپ جونیئر کے اس ٹوئٹ سے کچھ متاثر نہ ہوئے۔ انہوں نے جوابی ٹوئٹ میں کچھ اس طرح افسوس کا اظہار کیا۔

ری پبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ اپنی مہم میں مسلسل اپنے مؤقف کو دہرا رہے ہیں کہ شامی مہاجرین کو قبول نہ کیا جائے۔ ٹرمپ کا یہ مؤقف ان کی سخت امیگریشن پالیسی کا ایک جزو قرار دیا جاتا ہے، جس میں وہ مسلمانوں کے امریکا داخل ہونے پر پابندی کا مطالبہ بھی کرتے ہیں۔