1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

سوشل میڈیا راؤنڈ اپ

رواں ہفتے سوشل میڈیا پر مختلف موضوعات سمیت کلبھوشن یادیو، سی پیک، اور امریکی صدر کے پہلے غیر ملکی دورے زیر بحث رہے۔

بین الاقوامی عدالت انصاف نے پاکستان کو بھارتی شہری کلبھوشن یادیو کی پھانسی روک دینے کا حکم  دیا ہے۔ عدالتی فیصلے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ مبینہ بھارتی جاسوس کلبھوشن کا معاملہ اس عدالت کے دائرہ کار میں آتا ہے۔ یہ فیصلہ سناتے ہوئے جج رونی نے کہا کہ  پاکستان اور بھارت کے درمیان ویانا کنوینشن کے تحت مجرموں تک سفارتی رسائی کے معاملے میں اختلاف پایا جاتا ہے اور اس عدالت کا مکمل فیصلہ آنے تک کلبھوشن کو پھانسی نہیں دی جا سکتی۔ اس فیصلہ سنائے جانے کے بعد سوشل میڈیا پر ہیش ٹیگ کلبھوشن یادیو ٹرینڈ کر رہا ہے۔ اس مضمون پر ہمیں ذولفقار احمد، اختر ضمان، اقبال بنگش، سلیم خان اور دیگر کئی صارفین نے کامنٹس لکھے۔

رواں ہفتے پاکستان کے وزیر اعظم نے چین کا بھی دورہ کیا۔ جہاں ان کی چینی صدر سے ملاقات ہوئی۔ پاکستان اور چین کے درمیان کئی  مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط کیے گئے۔  ان میں سے ایک منصوبے کے تحت چین کو بذریعہ سڑک اور ریل گوادر سے ملایا جائے گا۔ پاکستان نے دنیا کی سب سے بڑی ای کامرس کمپنی علی بابا کے ساتھ  بھی ایک مفاہمتی یاداشت پر دستخط کیے۔    

Saudi Arabien Riad Fahne vor Besuch US Präsident Trump (picture-alliance/abaca/E. Abdelrehim )

سعودی عرب کے دورے کے دوران امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ان کا پسندیدہ کھانا ’اسٹیک‘ پیش کیا جائے گا

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے آج اپنے پہلے غیر ملکی دورے کا آغاز کر دیا ہے۔ امریکی صدر سعودی عرب سے اپنے دورے کا آغاز کریں گے۔ جس کے بعد وہ اسرائیل، بیلجیم، اٹلی اور ویٹیکن کا بھی دورہ کریں گے۔ ڈونلد ٹرمپ کا یہ دورہ سوشل میڈیا پر زیر بحث ہے۔ کئی میڈیا رپورٹس کے مطابق توقع نہیں کی جارہی کہ  ڈونلڈ ٹرمپ سعودی عرب دورے کے دوران انسانی حقوق کی بات چیت کریں گے بلکہ ان کے دورہ پر معاشی تعاون پر زیادہ بات چیت کی جائے گی۔

امریکا اور عرب ممالک کی مشترکہ سمٹ میں توقع ہے کہ پاکستان کے وزیر اعظم اور امریکی صدر کی ملاقات ہو جائے۔ اس حوالے سے ڈی ڈبلیو سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان نفیس ذکریہ نے کہا،’’ پاکستان اور امریکا کے دیرینہ تعلقات ہیں۔ دونوں ممالک کے درمیان ایک اسٹریٹیجک ڈائیلاگ کا سلسلہ بھی جاری ہے۔‘‘  

ایسو سی ایٹڈ پریس کی جانب سے شائع ہونے والی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کے دورے کے دوران امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ان کا پسندیدہ کھانا ’اسٹیک‘ پیش کیا جائے گا اور اس کے ساتھ خاص کیچ اپ پیش کی جائے گی۔ اس کے ساتھ ان کو سعودی عرب کے روایتی کھانے بھی پیش کیے جائیں گے۔