1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

سام سنگ کے خلاف ایپل کی ایک بڑی کامیابی

امریکی ادارے ایپل نے دُنیا کے مختلف ملکوں میں سام سنگ کے خلاف اس الزام میں مقدمات قائم کر رکھے ہیں کہ یہ جنوبی کوریائی ادارہ اُس کی مصنوعات کی ہو بہو نقول تیار کر کے فروخت کر رہا ہے۔ اب اپیل کو ایک بڑی کامیابی ملی ہے۔

ایپل اور سام سنگ کی مصنوعات

ایپل اور سام سنگ کی مصنوعات

جرمن شہر ڈسلڈورف کی ایک عدالت نے عبوری عرصے کے لیے سام سنگ کو اپنا ٹیبلٹ کمپیوٹر گلیکسی ٹیب 10.1 ہالینڈ کے سوا یورپی یونین کے دیگر رکن ملکوں میں فروخت کرنے سے منع کر دیا ہے۔ ایپل نے اِس فیصلے کی، جو کہ اُس کے لیے ایک بڑی فتح کے مترادف ہے، تصدیق کر دی ہے۔ فوری طور پر یہ واضح نہیں ہو سکا ہے کہ ہالینڈ کو اس فیصلے سے مستثنیٰ کیوں قرار دیا گیا ہے۔

اس عدالتی فیصلے سے ایک ہی ہفتہ قبل سام سنگ کو اپنے خلاف اسی طرح کی قانونی چارہ جوئی کے باعث آسٹریلیا میں اس ٹیبلٹ کے اجراء میں تاخیر پر مجبور ہونا پڑا تھا۔

سام سنگ کا گلیکسی ٹیبلٹ کمپیوٹر

سام سنگ کا گلیکسی ٹیبلٹ کمپیوٹر

ایپل کا موقف یہ ہے کہ سام سنگ کے گلیکسی ماڈل کے موبائل فونز اور ٹیبلٹ کمپیوٹر ایپل کی اسی طرح کی مصنوعات آئی فون اور آئی پیڈ کی ہو بہو نقل ہیں۔ جواب میں سام سنگ نے بھی، جس کے ٹیبلٹ کمپیوٹرز میں گوگل کا اینڈرائیڈ سافٹ ویئر استعمال کیا گیا ہے، ایپل کے خلاف قانونی چارہ جوئی شروع کر دی ہے۔

سیول میں شِن ینگ سکیورٹیز کے ایک تجزیہ کار لی سیونگ وُو نے کہا:’’اس میں کوئی شک و شبہ نہیں ہے کہ یہ عدالتی فیصلہ سام سنگ پر منفی اثرات مرتب کرے گا۔ سام سنگ کئی شعبوں میں ایپل کے ساتھ مقابلہ بازی کر رہا ہے۔ اس طرح کے فیصلوں سے مصنوعات کی فروخت میں عارضی کمی ہو سکتی ہے اور قانونی چارہ جوئی سے نمٹنے کی وجہ سے اخراجات میں اضافہ ہو سکتا ہے۔‘‘

جرمن عدالت کا فیصلہ ایپل کے لیے ایک بڑی فتح ہے

جرمن عدالت کا فیصلہ ایپل کے لیے ایک بڑی فتح ہے

گزشتہ برس سام سنگ کی آمدنی 142 ارب ڈالر ریکارڈ کی گئی۔ اس ادارے کو اپنی آمدنی کا تیس فیصد موبائل فونز اور ٹیبلٹ کمپیوٹرز کی فروخت سے حاصل ہوتا ہے جبکہ باقی کی ساری آمدنی میموری چِپس اور ٹیلی وژن آلات کی فروخت سے آتی ہے۔

جہاں ایپل نے اس سال کی پہلی ششماہی میں 14 ملین آئی پیڈز فروخت کیے، وہاں سام سنگ کا ٹیبلٹ کمپیوٹر 7.5 ملین کی تعداد میں فروخت ہونے کی توقع ہے۔

رپورٹ: امجد علی

ادارت: کشور مصطفیٰ

DW.COM

ویب لنکس