1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

زہريلی گيس باغيوں کے ہی گودام ميں تھی، روس

روسی وزارت دفاع نے بتايا ہے کہ شام ميں درجنوں شہريوں کی ہلاکت کا سبب بننے والے فضائی حملے ميں دمشق افواج نے در اصل دہشت گردوں کے ايک گودام کو نشانہ بنايا تھا جس ميں زہريلا مواد ذخيرہ تھا۔

روسی دارالحکومت ماسکو سے روسی وزارت دفاع نے اس بارے ميں بدھ پانچ اپريل کو جاری کردہ ايک بيان ميں کہا ہے کہ شامی شہر خان شيخون ميں زيريلی گيس باغيوں کے گودام کو نشانہ بنائے جانے کے بعد پھيلی۔ منگل کے روز شامی صدر بشار الاسد کی حامی افواج نے ايک ويئر ہاؤس پر فضائی حملہ کيا، جس کے بعد وہاں سے زہريلی گيس خارج ہونے لگی اور درجنوں شہريوں کی ہلاکت کا سبب بنی۔

آج صبح موصول ہونے والی رپورٹوں کے مطابق خان شيخون ميں ہونے والے حملے ميں ہلاک شدگان کی تعداد اب بہتر ہو گئی ہے، جن ميں بيس بچے اور سترہ عورتيں بھی شامل ہيں۔ ان ہلاکتوں کی تصديق سيريئن آبزرويٹری آف ہيومن رائٹس نے کر دی ہے۔ 

امريکا نے اس واقعے کا ذمہ دار اسد انتظاميہ کو قرار ديا ہے جبکہ دنيا بھر سے اس کی شديد مذمت جاری ہے۔ آج بدھ کے روز ہی امريکی شہر نيو يارک ميں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا ايک ہنگامی اجلاس طلب کيا گيا ہے، جس ميں شام ميں يہ تازہ کيميائی حملہ زير بحث آئے گا۔ اجلاس ميں تازہ حملے کی مذمت کے ليے مغربی ممالک کی طرف سے تيار کردہ ايک قرارداد کے مسودے پر بات چيت ہو گی۔