1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

رواں برس کی کامیاب ترین اداکارہ، سکارلٹ جوہانسن

فوربز میگزین کے مطابق امریکی اداکارہ سکارلٹ جوہانسن کی فلموں نے رواں برس سب سے زیادہ بزنس کیا ہے۔ عالمی سطح پر اُن کی ایک فلم کے سوا ارب ڈالر کے قریب ٹکٹ فروخت ہوئے۔

عالمی سطح پر دولت اور امارت سے متعلق مختلف معاملات پر نگاہ رکھنے والے میگزین فوربز نے رواں برس کے ایسے کامیاب اداکاروں کی فہرست جاری کر دی ہے، جن کی فلموں کو باکس آفس پر انتہائی زیادہ کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ سن 2016 میں امریکی اداکارہ سکارلٹ جوہانسن کی فلموں نے سب سے زیادہ کامیابی حاصل کی۔ اُن کی فلموں نے عالمی سینما مارکیٹ میں 1.2 بلین ڈالر سے زائد کا منافع حاصل کیا۔

جوہانسن کی رواں برس کی سب سے کامیاب فلم ’کیپٹن امریکا: سول وار‘ کو قرار دیا گیا ہے۔ امریکا اور بیرونی ممالک میں اس فلم نے کامیابی کے جھنڈے گاڑ دیے۔ اس فلم نے بین الاقوامی منڈی سے 1.15 بلین ڈالر حاصل کرنے میں کامیابی حاصل کی۔ سکارلٹ جوہانسن امریکی فلمی صنعت ہالی ووڈ کی اے کیٹگری کی اداکارہ ہیں۔

رواں برس اگست میں فوربز میگزین نے اُن اداکاروں کی فہرست جاری کی تھی جن کو بھاری معاوضے پیش کیے گئے۔ اس فہرست میں ’ہنگر گیم‘ فلموں کی سیریز سے شہرت حاصل کرنے والی اداکارہ جینیفر لارنس کو پہلا مقام حاصل ہوا تھا جب کہ سکارلٹ جوہانسن کو پچیس ملین ڈالر کمانے پر تیسری پوزیشن حاصل ہوئی تھی۔

Filmszene Die Insel (Imago/United Archives)

اداکارہ سکارلٹ جوہانسن ایک فلم کے منظر میں

ایک سال میں سب سے زیادہ معاوضہ حاصل کرنے والی دوسری بڑی اداکارہ پینتالیس برس کی میلیسا میکارتھی ہیں۔ میکارتھی بنیادی طور پر امریکی ٹیلی وژن پر کیریکٹر ایکٹر رول کرنے والی سب سے مشہور اداکارہ سمجھی جاتی ہیں۔ وہ کئی فلموں میں بھی جلوہ گر ہو چکی ہیں۔

سکارلٹ جوہانسن کے بعد ایک اور امریکی اداکارہ کرس ایونز کی فلموں نے عالمی سطح پر سب سے زیادہ منافع حاصل کیا۔ ان کی فلم ’ہیل، سیزر‘ کے 63 ملین ڈالر سے زائد ٹکٹ فروخت ہوئے ہیں۔ تیسرے مقام پر رابرٹ ڈَن وے ہیں۔ فوربز ادارے نے باکس آفس پر پروڈیوسر اور ڈسٹریبیوٹر کے لیے سب سے زیادہ منافع حاصل کرنے کا ریکارڈ ٹکٹوں کی فروخت سے مرتب کیا ہے۔

یہ امر اہم ہے کہ سب سے زیادہ معاوضہ حاصل کرنے والی اداکارہ جینیفر لارنس کی حالیہ ہفتوں میں ریلیز ہونے والی  دو فلمیں ’ایکس مین: ایپوکلپس‘ اور ’پیسنجرز‘ کو امریکا اور عالمی منڈی میں خاطرخواہ پذیرائی حاصل نہیں ہوئی ہے۔