1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

دل جوان ہونا چاہیے، 72 سالہ گلوکارہ شرلی بیسی کنسرٹ میں

بہتر سالہ برطانوی گلوکارہ شَرلی بَیسی نے حال ہی میں برطانوی دارالحکومت لندن میں اپنے فن کا مظاہرہ کیا اور کنسرٹ کے آغاز میں ہی جیمز بانڈ سیریز کی فلم ’’ڈائمنڈز آر فَور اَیور‘‘ کا ٹائیٹل گیت گا کر شائقین کے دل موہ لئے۔

default

گلوکارہ شرلی بیسی

لندن کے راؤنڈ ہاؤس میں اُن کے اِس ہاؤس فُل کنسرٹ کو دیکھنے اور سننے کے لئے تین ہزار پُرجوش شائقین موجود تھے۔ شَرلی بَیسی نے جب یہ کہا کہ وہ اپنے کچھ پرانے گیت گائیں گی تو ہال تالیوں سے گونج اٹھا۔ جب اُنہوں نے یہ کہا کہ وہ کچھ نئے گیت بھی پیش کریں گی تو بھی اِس گونج میں محض تھوڑی سی ہی کمی ہوئی۔

Kalenderblatt Shirley Bassey Die britische Sängerin Shirley Bassey im Jahr 1969.

شرلی 1969ء کی ایک تصویر میں

زور دار اور خوبصورت آواز کی حامل شَیرلی بَیسی’’ڈائمنڈز آر فار اَیور‘‘ کے علاوہ وہ جیمبز بانڈ سیریز کی دو مزید فلموں ’’گولڈ فِنگر‘‘ اور ’’مُون ریکر‘‘ کے ٹائیٹل گیت بھی گا چکی ہیں۔ اُن کے ہِٹ گیتوں میں ’’بِگ سپینڈر‘‘ اور ’’آئی ایم واٹ آئی ایم‘‘ بھی شامل ہیں۔ وہ برطانیہ کی کامیاب ترین گلوکارہ تصور کی جاتی ہیں۔

Sean Connery als James Bond

شرلی بیسی نے 1964ء میں جیمز بانڈ سیریز کی فلم گولڈ فنگر کا بھی ٹائیٹل گیت گایا تھا، جس میں شان کونری نے بانڈ کا مرکزی کردار ادا کیا تھا۔

اکتوبر کے اواخر میں منعقد ہونے والے اِس کنسرٹ کی دو بڑی وجوہات تھیں: ایک تو یہ کہ اسٹیج پر اِس فنکارہ کو اپنے فن کا مظاہرہ کرتے پچاس سال مکمل ہو گئے ہیں۔ ٹھیک نصف صدی پہلے اُن کا پہلا گیت ہِٹ ہوا تھا۔ دوسری وجہ اُن کا تازہ ترین اسٹوڈیو البم ’’دا پرفارمَینس‘‘ ہے، جو نومبر کے اوائل میں بازار میں آ رہا ہے۔ بیس برسوں کے طویل وقفے کے بعد یہ اُن کا پہلا اسٹوڈیو البم ہے۔

آٹھ جنوری سن 1937ء کو ویلز کے شہر کارڈِف میں ایک انگریز خاتون کے ہاں جنم لینے والی اِس فنکارہ کے اب تک تقریباً 135 ملین ریکارڈز فروخت ہو چکے ہیں۔ وہ ابھی دو سال کی تھیں، جب اُن کا والد، جس کا تعلق نائیجیریا سے تھا، اُنہیں اور اُن کی والدہ کو چھوڑ کر چلا گیا تھا۔ شرلی بیسی کی ذاتی زندگی اور بھی کئی المناک واقعات سے عبارت ہے۔ 1999ء میں اُنہیں ملکہ کی جانب سے ’’ڈیم آف دا آرڈر آف دا برٹش ایمپائر‘‘ کے اعزاز سے نوازا گیا تھا۔

رپورٹ: امجد علی

ادارت: شادی خان