1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

دعا کرو کہ تم غریب ہو جاؤ، پوپ کا فلاحی کارکنوں کو مشورہ

مسیحیوں کے روحانی پیشوا پوپ فرانسس غریبوں کی حمایت اور اپنے شائستہ انداز کی وجہ سے مشہور ہیں۔ اب انہوں نے ایک اطالوی فلاحی تنظیم کے کارکنوں کو غریبوں کے اظہار یکجہتی کرنے اور اپنے لیے غریب ہونے کی دعا کرنے کا کہا ہے۔

پوپ فرانسس نے اٹلی کی افریقہ میں کام کرنے والی ایک میڈیکل تنظیم کے کارکنوں سے ملاقات کرتے ہوئے غریبوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کرنے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ پوپ فرانسس کا ڈاکٹر وِد افریقہ نامی تنظیم کے کارکنوں سے ملاقات کرتے ہوئے کہنا تھا، ’’میں آپ سے درخواست کرتا ہوں کہ براہ مہربانی میرے لیے بھی دعا کیجیے کہ خدا مجھے بھی ہر دن کے ساتھ مزید غریب کرے۔‘‘

اس ملاقات میں مسیحیوں کے روحانی پیشوا نے سات افریقی ملکوں میں غریبوں کو طبی سہولیات فراہم کرنے پر ان کارکنوں اور تنظیم کا شکریہ بھی ادا کیا۔ اس موقع پر پوپ کا زور دیتے ہوئے کہنا تھا، ’’صحت کوئی قابل خرید چیز نہیں ہونی چاہیے۔ یہ سب کا قدرتی حق ہے۔ اسی لیے صحت کی سہولیات اور مواقع سب کے لیے یکساں ہونے چاہییں۔‘‘

تاہم نے انہوں نے اس حقیقت کو بھی تسلیم کیا کہ بہت سے ملکوں میں یہ بنیادی سہولیات صرف امیر افراد کے لیے ہیں۔ ویٹی کن کی طرف سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق پوپ فرانسس کا کہنا تھا، ’’غریبوں کو دنیا کے مختلف حصوں اور افریقہ کے بہت سے ممالک میں صحت کی بنیادی سہولیات بھی نہیں دی جاتیں۔ یہ سبھی کا حق ہے لیکن اسے صرف مخصوص طبقے کے لیے مختص کر دیا گیا ہے، وہ طبقہ جو اسے افورڈ کر سکتا ہے۔‘‘

جاری ہونے والے بیان کے مطابق افریقہ میں صورتحال خاص طور پر قابل تشویش ہے، ’’افریقہ میں بہت سی مائیں زچگی کے دوران ہی ہلاک ہو جاتی ہیں جبکہ بہت سے نوزائیدہ بچے غذائی قلت اور بیماریوں کی وجہ سے اس دنیا میں آنے کے بعد ایک ماہ تک بھی زندہ نہیں رہتے۔‘‘

پوپ کے ساتھ اس ملاقات میں طبی فلاحی تنظیم کے نو ہزار کے قریب ڈاکٹر اور کارکن شریک تھے۔ اس اطالوی تنظیم کی بنیاد پینسٹھ برس پہلے ایک ڈاکٹر اور ایک پادری نے مل کر رکھی تھی جبکہ اس وقت یہ یوگنڈا، تنزانیہ، موزمبیق، ایتھوپیا، انگولا، جنوبی سوڈان اور سیرالیون میں بھی کام کر رہی ہے۔